ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

پلوامہ حملہ آور کا مددگار گرفتار، NIA نے کیا انکشاف، آن لائن منگوایا تھا دھماکہ خیز مواد

این آئی اے کے ایک سینئر افسر نے نیوز18 سے بات چیت میں بتایا کہ 22 سال کے ماگرے نے یہ انکشاف کیا ہے کہ بیٹری اور امونیم نائیٹرو جسے انہوں نے بم بنانے کیلئے استعمال کیا تھا وہ آن لائن پورٹل سے آرڈر کی گئی تھی۔

  • Share this:
پلوامہ حملہ آور کا مددگار گرفتار، NIA  نے کیا انکشاف، آن لائن منگوایا تھا دھماکہ خیز مواد
این آئی اے کے ایک سینئر افسر نے نیوز18 سے بات چیت میں بتایا کہ 22 سال کے ماگرے نے یہ انکشاف کیا ہے کہ بیٹری اور امونیم نائیٹرو جسے انہوں نے بم بنانے کیلئے استعمال کیا تھا وہ آن لائن پورٹل سے آرڈر کی گئی تھی۔

قومی جانچ ایجنسی(National Investigation Agency)  کو پلوامہ حملے (Pulwama Attack)سے جڑے معاملے میں بڑی کامیابی ملی ہے۔ ایجنسی نے جمعے کو جانکاری دی کہ پلوامہ حملے سے جڑے ایک ملزم اور جیش محمد (Jaish-E-Mohammad) کے اوور گرنڈ ورکر شاکر بشیر ماگرے کو گرفتار کیا ہے۔ شاکر نے خودکش حملہ عادل احمد ڈار کو پناہ اور دیگر لاجسٹک مدد دی تھی۔ یہی نہیں اس نے اس این آئی اے (NIA)کی پوچھ۔گچھ میں بڑا انکشاف بھی کیا ہے۔ ماگرے نے بتایا کہ اس خودکش حملے میں بم بنانے کیلئے استعمال کی گئی امونیم نائٹریٹ، نائیٹرو۔گلسرین اور آر ڈٰ ایکس جیسی تمام طرح کی دھماکہ خیز مواد آن لائن آرڈر کی گئی تھی۔

این آئی اے کے ایک سینئر افسر نے نیوز18 سے بات چیت میں بتایا کہ 22 سال کے ماگرے نے یہ انکشاف کیا ہے کہ بیٹری اور امونیم نائیٹرو جسے انہوں نے بم بنانے کیلئے استعمال کیا تھا وہ آن لائن پورٹل سے آرڈر کی گئی تھی۔

ماگرے نے یہ بھی بتایا کہ دھماکوں سے بھری ماروتی ایکو کار جس کا استعمال سی آر پی ایف کے قافلے پر حملہ کرنے کیلئے کیا گیا تھا وہ ہی اسے چلاکر جائے واقعہ سے تقریبا 500 میٹر پہلے تک لیکر گیا تھا۔ حملے کی جگہ 500 میٹر دور وہ گاڑی سے اتر گیا اور اس کے بعد عادل احمد ڈار اد گاڑی کو چلاکر گیا اور حملے کو انجام دیا۔

این آئی اے نے جانکاری دی کہ اس نے 2018 کے آخر سے فروری 2019 یعنی کہ پلوامہ حملے تک اپنے گھر میں عادل احمد ڈار اور پاکستانی دہشت گرد محمد عمر فاروق کو پناہ دی تھی۔ یہی نہیں شاکر نے آئی ای ڈی (IED ) کی تیاری میں ان دونوں کی مدد کی تھی۔ شاکر کو تفصیلی پوچھ۔گچھ کیلئے 15 دن کی این آئی اے حراست میں بھیج دیا گیا ہے۔

First published: Feb 29, 2020 07:52 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading