ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

پونے کے ڈاکٹر کا الزام ، کناٹ پلیس میں لوگوں نے پوچھا : آپ ہندو ہو ؟ پھر زبردستی بلوایا جے شری رام

پونے کے مشہور ڈاکٹرارون گدرے کے ساتھ گزشتہ منگل کو نوجوانوں کے ایک گروپ نے دہلی کے کناٹ پلیس میں نہ صف بدسلوکی کی بلکہ ان سے زبردستی جے شری رام بلوانے کا معاملہ بھی سامنے آیا ہے ۔

  • Share this:
پونے کے ڈاکٹر کا الزام ، کناٹ پلیس میں لوگوں نے پوچھا : آپ ہندو ہو ؟ پھر زبردستی بلوایا جے شری رام
پونے کے ڈاکٹر کا الزام ، کناٹ پلیس میں لوگوں نے پوچھا : آپ ہندو ہو ؟ پھر زبردستی بلوایا جے شری رام

پونے کے مشہور ڈاکٹر ( گائیکنالوجسٹ ) ارون گدرے کے ساتھ گزشتہ منگل کو نوجوانوں کے ایک گروپ نے دہلی کے کناٹ پلیس میں نہ صف بدسلوکی کی بلکہ ان سے زبردستی جے شری رام بلوانے کا معاملہ بھی سامنے آیا ہے ۔ گدرے جنتر منتر کے پاس وائی ایم سی اے کے ہاسٹل میں ٹھہرے ہوئے تھے اور صبح سیروتفریح کیلئے کناٹ پلیس گئے تھے ۔


انگریزی اخبار انڈین ایکسپریس سے بات چیت میں 61 سال کے ڈاکٹر گدرے نے کہا کہ جیسا میرے ساتھ ہوا ہے ویسا کسی کے ساتھ نہیں ہونا چاہئے ۔ یہ بدقسمتی ہے ۔ گدرے نے کہا کہ میں منگل کو صبح سیر کیلئے نکلا تھا اور تبھی میرا سامنا نوجوانوں کے ایک گروپ سے ہوگیا ۔


ان لوگوں میں سے ایک نے مجھ سے پوچھا کہ انکل کیا آپ ہندو نہیں ہیں ؟ بعد میں انہوں نے مجھ سے زور سے جے شری رام بولنے کیلئے کہا اور میں نے ایس کیا بھی ۔ مجھے یہ واقعہ ایک مذاق لگا تھا اس لئے میں نے پولیس کو اس کی اطلاع نہیں دی تھی ۔ گدرے کے مطابق انہوں نے اپنے ایک جرنلسٹ دوست کو اس واقعہ کے بارے میں بتایا ، جس کے بعد یہ واقعہ سب کے سامنے آیا ۔


گدرے کے مطابق یہ میرے لئے حیران کن تھا ، لیکن میرے جے شری رام بولنے کے بعد وہ لوگ چلے گئے ۔ گدرے نے کہا کہ میں نے اپنی زندگی میں کبھی ایسا واقعہ نہیں دیکھا ، اس لئے میں کافی حیران ہوا ۔ انہوں نے کہا کہ مذہب یا ذات کی بنیاد پر کسی بھی شخص کو نشانہ نہیں بنایا جانا چاہئے ۔ بتادیں کہ منگل دیر شام اس واقعہ کے سلسلہ میں شکایت درج کرادی گئی ہے ۔
First published: May 29, 2019 08:14 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading