உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    چنڈی گڑھ: پنجاب کابینہ کی میٹنگ، بجلی کے شعبے سمیت مختلف مسائل پر کیا گیا تبادلہ خیال

    Youtube Video

    ذرائع کے مطابق اس میٹنگ میں بجلی کے شعبے سمیت مختلف مسائل پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ اس میٹنگ میں کابینی وزراء بہرام مہیندر اور رضیہ سلطان نے شرکت نہیں کی۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Share this:
      چندی گڑھ : پنجاب کے نئے وزیراعلیٰ چرنجیت سنگھ چنی بہت مصروف ہیں۔ انھیں کئی محاذ پر چیلنجز کا سامنا ہے۔ وہ حکومتی اور تنظیمی محاذ پر ڈٹے ہوئے ہیں۔ انھوں نے کابینہ کی میٹنگ طلب کی۔ ذرائع کے مطابق اس میٹنگ میں بجلی کے شعبے سمیت مختلف مسائل پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ اس میٹنگ میں کابینی وزراء بہرام مہیندر اور رضیہ سلطان نے شرکت نہیں کی۔ واضح ہو کہ پنجاب کے وزیراعلیٰ چرنجیت سنگھ چنی کی زیرقیادت کابینہ میں دس سابق وزرا کی واپسی ہوئی ہے جبکہ آٹھ نئے چہروں کو شامل کیا گیا ہے ۔ وزراء کی حلف برداری کی تقریب مقررہ وقت پر اتوار کی شام 4.30 بجے راج بھون میں منعقد ہوئی ، جہاں کابینہ میں شامل ہونے والے نئے وزراء کو گورنر نے حلف دلایا ۔

      کابینہ میں شامل ہونے والوں میں برہم موہندرا ، منپریت سنگھ بادل ، راجندر باجوا ، ارونا چودھری ، سکھویندر سنگھ سرکاریا اور رانا گرجیت سنگھ کے نام شامل ہیں ۔ اس کے علاوہ رضیہ سلطانہ ، وجے اندر سنگلا ، بھارت بھوشن آشو ، رندیپ سنگھ نابھا کو بھی چرنجیت سنگھ چنی کی نئی کابینہ میں موقع دیا گیا ہے۔


      خیال رہے کہ وزیر اعلی چرنجیت سنگھ چنی نے نئی کابینہ میں شامل کئے جانے والے چہروں کو لے کر دہلی میں پارٹی ہائی کمان کے ساتھ حتمی مرحلے کی گفتگو کی تھی ۔ وزراء کی حتمی فہرست تیار ہونے کے بعد وزیر اعلیٰ چنی نے ہفتہ کی دوپہر تقریبا 12.30 بجے راج بھون میں گورنر بنواری لال پروہت سے ملاقات کی ، جس کے بعد حلف برداری کیلئے آج کی تاریخ طے کی گئی ۔

      قابل ذکر ہے کہ چنی کے راہل گاندھی کے ساتھ بھی اچھے تعلقات ہیں ۔ پارٹی نے ایک غریب دلت کو وزیر اعلیٰ بنا کر ایک پیغام دینے کی کوشش کی ہے۔ ایسی صورت حال میں اگر کانگریس تمام مشکلات کے باوجود پنجاب جیتنے میں کامیاب ہو جاتی ہے ، تو چنی ایک نیا ایکس فیکٹر ثابت ہو سکتے ہیں ۔

       
      Published by:Sana Naeem
      First published: