உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    PM Modi Security Breach: ایکشن میں مرکزی کمیٹی، پولیس کے ایک درجن سے زیادہ سینئر افسران کو کیا طلب

    PM Modi Security Breach: ایکشن میں مرکزی کمیٹی، پولیس کے ایک درجن سے زیادہ سینئر افسران کو کیا طلب

    PM Modi Security Breach: ایکشن میں مرکزی کمیٹی، پولیس کے ایک درجن سے زیادہ سینئر افسران کو کیا طلب

    PM Modi Security Breach : وزیر اعظم نریندر مودی (PM Narendra Modi) کی سیکورٹی میں چوک (Security Lapse) کو لے کر تشکیل مرکز کی جانچ کمیٹی (Central Inquiry Committee) نے فیروز پور پہنچ کر پیارے یانا فلائی اوور (Pyarayana flyover) کا معائنہ کیا ، جہاں پر وزیر اعظم کا قافلہ رکا تھا ۔

    • Share this:
      چنڈی گڑھ : وزیر اعظم نریندر مودی (PM Narendra Modi)  کی سیکورٹی میں چوک  (Security Lapse)  کو لے کر تشکیل مرکز کی جانچ کمیٹی (Central Inquiry Committee) نے فیروز پور پہنچ کر پیارے یانا فلائی اوور (Pyarayana flyover) کا معائنہ کیا ، جہاں پر وزیر اعظم کا قافلہ رکا تھا ۔ مرکزی سرکار کے ذریعہ تشکیل کمیٹی نے فیروز پور میں بی ایس ایف کے دفتر میں تین اضلاع کے پولیس سپرنٹینڈنٹس سمیت پنجاب کے ایک درجن سے زیادہ اعلی افسران کو پوچھ گچھ کیلئے بلایا ہے ۔ مرکز کی کمیٹی نے حسینی والا کا بھی دورہ کیا ، جہاں وزیر اعظم کا پروگرام ہونے والا تھا ۔

      ادھر پنجاب کے چیف سکریٹری انیرودھ تیواری نے وزیر اعظم مودی کے پنجاب دورہ کے دوران ان کی سیکورٹی کو لے کر ہوئی چوک کے واقعہ کے سلسلہ میں مرکزی حکومت کو ایک رپورٹ سونپی ہے ۔ کمیٹی کی قیادت کابینہ سکریٹریٹ کے سکریٹری ( سیکورٹی) سدھیر کمار سکسینہ کررہے ہیں اور اس میں خفیہ بیورو کے جوائنٹ ڈائریکٹر بلبیر سنگھ اور اسپیشل سیکورٹی گروپ کے آئی جی ایس سریش شامل ہیں ۔

      ریاستی سرکار کے ذریعہ مرکزی حکومت کو سونپی گئی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ واقعہ کے سلسلہ میں ایف آئی آر درج کی گئی ہے اور خامیوں کی جانچ کیلئے دو رکنی کمیٹی تشکیل دی ہے ۔ سرکاری ذرائع کا کہنا ہے کہ چیف سکریٹری انیرودھ تیواری نے بدھ کو وزیر اعظم مودی کے دورہ پر پیش آئے واقعات کو لے کر سلسلہ وار جانکاری شیئر کی ہے ۔

      بتادیں کہ پنجاب کے دورے پر گئے وزیر اعظم نریندر مودی کی سیکورٹی میں اس وقت ’بڑی چوک‘ سامنے آئی ، جب فیروز پور میں کچھ مظاہرین نے اس سڑک شاہراہ پر رکاوٹ پیدا کردی، جہاں سے انہیں گزرنا تھا۔ اس وجہ سے وزیر اعظم مودی فلائی اوور پر تقریبا 20 منٹ تک پھنسے رہے۔ حادثہ کے بعد وزیر اعظم کسی پروگرام میں شامل ہوئے بغیر دہلی لوٹ آئے۔

      مرکزی حکومت نے اس حادثہ کے لئے پنجاب کی کانگریس حکومت کو ذمہ دار ٹھہرایا ہے اور اس سے رپورٹ طلب کی ہے۔ حالانکہ پنجاب کے وزیر اعلیٰ چرنجیت سنگھ چنی  نے کہا کہ وزیر اعظم مودی کی سیکورٹی میں کوئی چوک نہیں ہوئی ہے اور اس کے پیچھے کوئی سیاسی مقصد نہیں تھا۔ انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم مودی کے پروگرام میں اچانک ہوئی تبدیلی کے سبب یہ واقعہ پیش آیا اور وزیر اعظم کی زندگی پر خطرے جیسی کوئی صورتحال نہیں تھی۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: