உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    لدھیانہ میں خوفناک حادثہ: جھگی میں آگ لگنے سے میاں۔بیوی اور بچوں سمیت 7 افراد کی جھلس کر موت

    جھونپڑی سے 7 لاشیں برآمد ہوئیں۔ اس حادثے میں جان گنوانے والے خاندان مہاجر مزدور تھے

    جھونپڑی سے 7 لاشیں برآمد ہوئیں۔ اس حادثے میں جان گنوانے والے خاندان مہاجر مزدور تھے

    Punjab seven members of migrant bihari family burnt: جھونپڑی سے 7 لاشیں برآمد ہوئیں۔ اس حادثے میں جان گنوانے والے خاندان مہاجر مزدور تھے اور ڈیون روڈ پر میونسپل کچرا ڈمپ یارڈ کے قریب ایک جھونپڑی میں رہ رہے تھے۔

    • Share this:
      چنڈی گڑھ: پنجاب کے لدھیانہ (Ludhiana۔ Punjab) میں منگل کی دیر رات ایک دردناک حادثہ پیش آیا۔ یہاں ٹبہ روڈ پر میونسپل کچرا ڈمپ یارڈ کے قریب بنی جھگی میں آگ لگنے سے ایک ہی خاندان کے سات افراد جھلس کر ہلاک ہو گئے۔ مشرقی لدھیانہ کے اسسٹنٹ کمشنر آف پولیس سریندر سنگھ نے بتایا کہ یہ واقعہ 19 اپریل کو دوپہر تقریباً 1:30 بجے پیش آیا۔ اطلاع ملتے ہی فائر بریگیڈ اور پولیس کی ٹیمیں موقع پر پہنچ گئیں۔ فائر بریگیڈ نے فوری طور پر آگ پر قابو پالیا۔ جھونپڑی سے 7 لاشیں برآمد ہوئیں۔ اس حادثے میں جان گنوانے والے خاندان مہاجر مزدور تھے اور ڈیون روڈ پر میونسپل کچرا ڈمپ یارڈ کے قریب ایک جھونپڑی میں رہ رہے تھے۔
      ٹبہ تھانے کے ایس ایچ او رنبیر سنگھ نے مہلوکین کی شناخت میاں بیوی اور ان کے پانچ بچوں کے طور پر کی ہے۔ یہ خاندان بہار کے سمستی پور ضلع کا رہنے والا تھا۔ ان کی شناخت سریش ساہنی (55)، اس کی بیوی ارونا دیوی (52)، بیٹیاں راکھی (15)، منیشا (10)، گیتا (8) اور چندا (5) اور 2 سالہ بیٹے سنی کے طور پر ہوئی ہے۔ مہاجر خاندان کا سب سے بڑا بیٹا راجیش اس حادثے میں بچ گیا، کیونکہ وہ اپنے دوست کے گھر سونے گیا تھا۔ راجیش ہی نے پولیس کو اپنے خاندان کے بارے میں معلومات فراہم کی تھیں۔ راجیش نے بتایا کہ اس کے والد سریش ساہنی فضول کام کرتے تھے۔


      مزید پڑھئے: CRUDE OIL کی بڑھتی قیمتوں کے بیچ پٹرول۔ڈیزل کی قیمت جاری، جانئے کتنا مہنگا ہوا تیل

      مشرقی لدھیانہ کے اسسٹنٹ کمشنر آف پولیس سریندر سنگھ نے بتایا کہ حادثے کی اطلاع ملتے ہی سول اسپتال کے ڈاکٹروں کی ایک ٹیم موقع پر پہنچ گئی۔ ڈی سی سوربھی ملک اور پولس کمشنر کوستب شرما بھی موقع پر پہنچ گئے۔ پولیس نے تمام لاشوں کو جھونپڑی سے نکال کر پوسٹ مارٹم کے لیے سول اسپتال پہنچایا۔ یہ معلوم نہیں ہوسکا کہ جھونپڑی میں آگ کیسے لگی۔ پولیس معاملے کی تفتیش کر رہی ہے۔ فارنسک ٹیم نے جائے وقوعہ سے نمونے اکٹھے کر کے ٹیسٹ کے لیے لیبارٹری بھجوا دیے ہیں۔ حالانکہ یہ بھی شبہ ہے کہ کسی نے جھگی میں اس وقت آگ لگائی جب پورا خاندان ایک ساتھ سو رہا تھا۔ پولیس ہر پہلو سے معاملے کی جانچ کر رہی ہے۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: