ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

جو بولتا ہے اسے نشانہ بنایا جا رہا ہے: صدر سے ملاقات کے بعد راہل کا مرکز پر حملہ

نئی دہلی۔ جے این یو تنازع پر مچے گھمسان پر آج کانگریس نائب صدر راہل گاندھی کی صدارت میں کانگریس کے وفد نے صدر پرنب مکھرجی سے ملاقات کی۔

  • IBN Khabar
  • Last Updated: Feb 18, 2016 02:37 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
جو بولتا ہے اسے نشانہ بنایا جا رہا ہے: صدر سے ملاقات کے بعد راہل کا مرکز پر حملہ
نئی دہلی۔ جے این یو تنازع پر مچے گھمسان پر آج کانگریس نائب صدر راہل گاندھی کی صدارت میں کانگریس کے وفد نے صدر پرنب مکھرجی سے ملاقات کی۔

نئی دہلی۔ جے این یو تنازع پر مچے گھمسان ​​پر آج کانگریس نائب صدر راہل گاندھی کی صدارت میں کانگریس کے وفد نے صدر پرنب مکھرجی سے ملاقات کی۔ راہل گاندھی نے پرنب مکھرجی سے ملاقات کر جے این یو تنازعہ اور ملک کے مختلف حصوں میں مبینہ طور پر طالب علموں کو نشانہ بنائے جانے کا مسئلہ اٹھایا۔


صدر پرنب مکھرجی سے ملاقات کے بعد راہل نے کہا کہ حکومت کے خلاف جو بولتا ہے اسے نشانہ بنایا جا رہا ہے۔ لیکن ہم طالب علموں کے جذبات کو حکومت کو دبانے نہیں دیں گے۔


راہل گاندھی نے کہا کہ آر ایس ایس ملک کے لوگوں پر اپنے نظریات مسلط کر رہا ہے لیکن ہم ایسا ہونے نہیں دیں گے۔ حکومت کا کام طالب علموں کی حفاظت کرنا ہے، ان کو دبانا نہیں۔ راہل نے اپنے اوپر ہو رہے تابڑ توڑ حملوں کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ حب الوطنی میرے خون میں ہے۔ میرے خاندان نے اس ملک کے لئے بار بار قربانی دی ہے۔ اگر کسی نے اس ملک کے خلاف کچھ بولا ہے تو اسے قانون کے مطابق سزا ملنی چاہئے۔


صدر سے ملاقات کے دوران راہل گاندھی کے ساتھ راجیہ سبھا میں اپوزیشن کے لیڈر غلام نبی آزاد، لوک سبھا میں پارٹی کے لیڈر ملکا ارجن کھڑگے اور بہت سے دوسرے پارٹی رہنما اور رکن پارلیمنٹ بھی تھے۔
First published: Feb 18, 2016 02:36 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading