ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

اترپردیش میں اکیلے الیکشن لڑنے کے لئے تیار ہے کانگریس، لیکن نتیجہ کیا ہوگا؟

کانگریس نے پہلی بار ایس پی-بی ایس پی کے ساتھ بات نہ بننے پر پلان بی کا انکشاف کیا ہے

  • Share this:
اترپردیش میں اکیلے الیکشن لڑنے کے لئے تیار ہے کانگریس، لیکن نتیجہ کیا ہوگا؟
کانگریس صدر راہل گاندھی: فائل فوٹو

کانگریس صدر راہل گاندھی نے اشارہ دیا ہے کہ یوپی میں ایس پی۔ بی ایس پی اتحاد سے انہیں کوئی فرق نہیں پڑتا۔ راہل گاندھی نے کہا کہ یوپی میں ان کی پارٹی اکیلے الیکشن لڑنے کے لئے تیار ہے۔ انہوں نے کہا کہ ان کی پارٹی کو کم کر کے اندازہ لگانا بہت بڑی غلطی ہو گی۔


راہل گاندھی 11 جنوری سے متحدہ عرب امارات کے دورہ پر جا رہے ہیں۔ اس سے پہلے انہوں نے گلف نیوز سے بات چیت کی۔ اس بات چیت کے دوران انہوں نے کہا، 'بہت سی دلچسپ چیزیں ہیں جو کانگریس یوپی میں کر سکتی ہے۔ اترپردیش کو لے کر کانگریس کی حکمت عملی بہت طاقتور ہے۔ لہذا اترپردیش میں ہم اپنی کارکردگی کو لے کر پرعزم ہیں اور ہم لوگوں کو چونکا دیں گے‘‘۔


کانگریس کا پلان بی کیا ہے؟


کانگریس نے پہلی بار ایس پی-بی ایس پی کے ساتھ بات نہ بننے پر پلان بی کا انکشاف کیا ہے۔ راہل گاندھی کا یہ بیان ایسے وقت میں آیا ہے جب یہ خبریں آرہی تھیں کہ ایس پی-بی ایس پی سے اتحاد میں کانگریس کے لئے صرف امیٹھی اور رائے بریلی کی سیٹیں ہی چھوڑی جائیں گی۔

یہ بھی پڑھیں: عظیم اتحاد: یوپی میں 37۔37 سیٹوں پر لڑیں گے ایس پی۔ بی ایس پی، کانگریس کو بس دو سیٹیں

راہل گاندھی نے کہا، "ہم اپوزیشن کو لانے کے لئے کوشش کر رہے ہیں۔ میں نے میڈیا میں کچھ بیانات سنے ہیں۔ لیکن ہم مل کر کام کر کے مودی کی شکست کو یقینی بنائیں گے۔ میں ایک بار پھر یہ کہنا چاہتا ہوں کہ یوپی پی میں کانگریس کو کمتر سمجھنا ایک بڑی بھول ہوگی۔ انہوں نے کہا، 'ہمارا پہلا ہدف وزیر اعظم نریندر مودی کو شکست دینا ہے۔ بہت سی ریاستیں ہیں جہاں ہم بہت مضبوط ہیں۔ وہاں ہم بی جے پی کو براہ راست ٹکر دیں گے۔ بہت سی ریاستیں ایسی ہیں جہاں ہم اتحاد کے ساتھ لڑیں گے۔ بہار، جھارکھنڈ، مہاراشٹر اور تمل ناڈو میں اتحاد کے فارمولے پر کام چل رہا ہے‘‘۔
First published: Jan 09, 2019 10:46 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading