ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

راہل گاندھی نےدو لاکھ طلبا کے ڈاٹامبینہ طورپرچوری ہونے پرسی بی ایس ای سربراہ کولکھا خط

راہل گاندھی نے سی بی ایس ای کے چیئرمین کو خط لکھ کر تقریباً دو لاکھ طلبہ کے ڈاٹا مبینہ طورپر چوری ہونے پر تشویش کا اظہار کیا ہے۔

  • UNI
  • Last Updated: Jul 24, 2018 07:36 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
راہل گاندھی نےدو لاکھ طلبا کے ڈاٹامبینہ طورپرچوری ہونے پرسی بی ایس ای سربراہ کولکھا خط
راہل گاندھی ۔ فائل فوٹو

نئی دہلی: کانگریس صدرراہل گاندھی نے سنٹرل بورڈ آف سیکنڈری ایجوکیشن (سی بی ایس ای) کے چیئرمین کو خط لکھ کر تقریباً دو لاکھ طلبہ کے ڈاٹا مبینہ طورپر چوری ہونے پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے اس کی جانچ کرانے اوریہ یقینی بنانے کی درخواست کی ہے کہ مستقبل میں اس طرح کی صورت حال پیدا نہ ہو۔

راہل گاندھی نے 20 جولائی کو سی بی ایس ای کی چیئرمین انیتا کروال کویہ خط لکھا تھا جسے پارٹی نے آج میڈیا کوجاری کیا۔ میڈیا کی رپورٹ کے مطابق سی بی ایس ای اورنیٹ امتحان میں شامل ہونے والے بچوں کی ذاتی تفصیلات لیک ہوئی ہیں۔ خبروں میں بتایا گیا ہے کہ ان امتحانات میں شامل ہونے والے تقریباً دولاکھ بچوں کا نام، پتہ، فون نمبر، ای میل اور دیگراطلاعات لیک ہوئی ہیں۔

خط میں راہل گاندھی نے لکھا ہے کہ خبروں میں یہ بھی دعوی کیا گیا ہے کہ یہ اطلا ع بعض آن لائن پورٹل سے قیمتاً حاصل کی جاسکتی ہیں۔ انہوں نے کہاکہ اس سے صاف ظاہر ہے کہ سی بی ایس ای کے پاس نجی ڈاٹا کی سیکورٹی کا کوئی انتظام نہیں ہے او راس سے سی بی ایس ای کے ذریعہ منعقد امتحانات کی ساکھ بھی کم ہوئی ہے۔

کانگریس صدر نے لکھا کہ اتنے بڑے پیمانے پرملک بھرکے طلبہ کا نجی ڈاٹا چوری ہونے کے واقعہ سے مجھے شدید تکلیف پہنچی ہے۔ یہ ڈاٹا کی سطح پراورامتحان منعقد کرنے کی سی بی ایس ای کی صلاحیت پر سوال کھڑا کرتا ہے۔ انہوں نے انیتا کروال سے معاملے کی جانچ کرکے اس واقعہ کے لئے ذمہ دار قصورواورو ں کی سزا دینے کی درخواست کی ہے۔

First published: Jul 24, 2018 07:36 PM IST