ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

کورونا کا اثر ، ریلوے نے 9 مئی سے رد کی راجدھانی ، شتابدی اور دورنتو ایکسپرس ، گھر سے نکلنے سے پہلے ضرور دیکھ لیں یہ لسٹ

ریلوے نے دہلی سے چلنے والی راجدھانی ، شتابدی اور دورنتو ایکسپرس سمیت 28 ٹرینوں کو 9 مئی سے بند کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔

  • Share this:
کورونا کا اثر ، ریلوے نے 9 مئی سے رد کی راجدھانی ، شتابدی اور دورنتو ایکسپرس ، گھر سے نکلنے سے پہلے ضرور دیکھ لیں یہ لسٹ
کورونا کا اثر ، ریلوے نے 9 مئی سے رد کی راجدھانی ، شتابدی اور دورنتو ایکسپرس ، گھر سے نکلنے سے پہلے ضرور دیکھ لیں یہ لسٹ

نئی دہلی : ملک اس وقت کورونا وائرس کی دوسری لہر سے لڑ رہا ہے ۔ اموات کی تعداد مسلسل بڑھتی جارہی ہے ۔ ریلوے پر بھی کورونا کی دوسری لہر کا اثر پڑ رہا ہے ۔ وہیں ریلوے نے دہلی سے چلنے والی راجدھانی ، شتابدی اور دورنتو ایکسپرس سمیت 28 ٹرینوں کو 9 مimtئی سے بند کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ اگلے حکم تک یہ ٹرینیں نہیں چلیں گی ۔


کورونا نے توڑے سبھی ریکارڈ


غور طلب ہے کہ ملک میں کورونا وائرس کے مریضوں کی تعداد ہر دن نئے ریکارڈ بنا رہی ہے ۔ گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران نئے مریضوں اور اموات کے اعداد و شمار نے پرانے سبھی ریکارڈ توڑ دئے ہیں ۔ گزشتہ ایک دن میں ملک بھر میں چار لاکھ بارہ ہزار 262 مثبت معاملات سامنے آئے ہیں جبکہ 3980 لوگوں کو اپنی جان گنوانی پڑی ہے ۔ یہ دوسری مرتبہ ہے کہ جب ایک دن میں کورونا کے چار لاکھ سے زیادہ معاملات سامنے آئے ہیں ۔ اس سے پہلے 30 اپریل کو چار لاکھ دو ہزار چودہ معاملات سامنے آئے تھے ۔ اس دن 3525 اموات بھی ہوئی تھیں ۔






ریلوے نے اب تک پورے ملک میں 2067 ٹن آکسیجن پہنچائی

غور طلب ہے کہ ملک کے کئی حصوں میں جاری آکسیجن بحران کے درمیان اب ریلوے نے محاذ سنبھال لیا ہے ۔ دراصل ہندوستانی ریلوے کی آکسیجن ایکسپریس نے گزشتہ 16 دنوں میں پورے ملک میں تقریبا 2067 ٹن میڈیکل آکسیجن پہنچائی ہے ۔ اس میں دہلی کو سب سے زیادہ 707 ٹن اور اس کے بعد اترپردیش کو 641 ٹن میڈیکل آکسیجن ملی ہے ۔

اس وقت ملک بھر میں 344 ٹن لیکوڈ میڈیکل آکیسجن یعنی ایل ایم او سے لدی مختلف ٹرینک ٹرین راستے میں ہیں ۔ ریلوے کی وزارت نے ایک بیان میں بدھ کو کہا کہ ہندوستانی ریلوے نے ملک کی مختلف ریاستوں میں لیکوڈ میڈیکل آکسیجن پہنچائی ہے ۔ اب تک ہندوستانی ریلوے مختلف ریاستوں میں 137 ٹینکروں میں 2067 ٹن لیکوڈ میڈیکل آکسیجن پہنچا چکی ہے ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: May 06, 2021 08:31 PM IST