ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

راجیہ سبھا الیکشن: راج بھر نے اپنی پارٹی کے رکن اسمبلی کو وجہ بتاؤ نوٹس دیا

لکھنؤ۔ اترپردیش سے راجیہ سبھا کی دس سیٹوں پر کل ہوئے انتخابات میں سهیل دیو بھارتیہ سماج پارٹی (ایس بی ایس پی) کے ایک ممبر اسمبلی پر کراس ووٹنگ کے لگے الزامات کے سلسلے میں پارٹی صدر اور پسماندہ بہبودو ترقیات کے وزیر اوم پرکاش راج بھر نے وضاحت طلب کرلی ہے۔

  • UNI
  • Last Updated: Mar 24, 2018 02:49 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
راجیہ سبھا الیکشن: راج بھر نے اپنی پارٹی کے رکن اسمبلی کو وجہ بتاؤ نوٹس دیا
اوم پرکاش راج بھر نے انل اگروال کو دی مبارکباد

لکھنؤ۔ اترپردیش سے راجیہ سبھا کی دس سیٹوں پر کل ہوئے انتخابات میں سهیل دیو بھارتیہ سماج پارٹی (ایس بی ایس پی) کے ایک ممبر اسمبلی پر کراس ووٹنگ کے لگے الزامات کے سلسلے میں پارٹی صدر اور پسماندہ بہبودو ترقیات کے وزیر اوم پرکاش راج بھر نے وضاحت طلب کرلی ہے۔ راج بھر نے ' یو این آئی' کو بتایا کہ ان کی پارٹی کے ممبر اسمبلی کیلاش سونکر پر کراس ووٹنگ کر کے بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) امیدوار کے حق میں ووٹ ڈالنے کے الزام لگ رہے ہیں۔ اس سلسلہ میں نیوز چینلز اور اخبارات میں خبریں بھی آئی ہیں۔


انہوں نے کہا کہ سونکر کو نوٹس جاری کر کے پوچھا گیا ہے کہ ان پر لگ رہے الزام کی سچائی کیا ہے، جواب دیں۔ ان سے جلد سے جلد نوٹس کا جواب دینے کے لیے کہا گیا ہے۔ جواب سے مطمئن نہیں ہونے پر پارٹی ان کے خلاف کارروائی کر سکتی ہے۔ غور طلب ہے کہ بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کے ساتھ ایس بی ایس پی بھی قومی جمہوری اتحاد کا ایک حصہ ہے۔


راجیہ سبھا انتخابات میں اتحادیوں کو بی جے پی امیدوار کے حق میں ووٹ کرنا تھا، لیکن سونکر کی جانب سے کراس ووٹنگ کئے جانے کی چرچا خوب ہو رہی ہے۔ واضح رہے کہ اترپردیش اسمبلی میں ایس بی ایس پی کے کل چار رکن اسمبلی ہیں۔

First published: Mar 24, 2018 02:49 PM IST