ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

بینکوں میں جعلسازیاں روکنے کے لئے آر بی آئی کی پانچ رکنی کمیٹی تشکیل

ریزرو بینک (آر بی آئی) نے پی این بی گھوٹالہ کے پیش نظر بینکوں میں بڑھتی ہوئی جعلسازیوں کی وجوہات کی جانچ اور ان کی روک تھام کے تدابیر کے لئے ایک پانچ رکنی کمیٹی تشکیل دی ہے۔

  • UNI
  • Last Updated: Feb 21, 2018 09:30 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
بینکوں میں جعلسازیاں روکنے کے لئے آر بی آئی کی پانچ رکنی کمیٹی تشکیل
ریزرو بینک (آر بی آئی) نے پی این بی گھوٹالہ کے پیش نظر بینکوں میں بڑھتی ہوئی جعلسازیوں کی وجوہات کی جانچ اور ان کی روک تھام کے تدابیر کے لئے ایک پانچ رکنی کمیٹی تشکیل دی ہے۔

نئی دہلی۔ریزرو بینک (آر بی آئی) نے پی این بی گھوٹالہ کے پیش نظر بینکوں میں بڑھتی ہوئی جعلسازیوں کی وجوہات کی جانچ اور ان کی روک تھام کے تدابیر کے لئے ایک پانچ رکنی کمیٹی تشکیل دی ہے۔ریزرو بینک نے بتایا کہ آر بی آئی کے مرکزی بورڈ آف ڈائریکٹرس کے سابق رکن وائی ایچ مالیگام کو کمیٹی کا صدر بنایا گیا ہے۔

آر بی آئی کی انکوائری کمیٹی کا کام یہ جانچ کرنا ہوگا کہ بینکوں کی جانب سے اثاثوں کی درجہ بندی اور بندوبست میں آر بی آئی کے جائزے کے مقابلے میں کافی فرق کیوں ہوتا ہے؟


اسے ختم کرنے کے لئے کن اقدامات کی ضرورت ہے؟


کمیٹی اس بات کی بھی جانچ کرے گی کہ بینکوں میں جعلسازی کے معاملے کیوں بڑھ رہے ہیں اور آئی ٹی کے استعمال سمیت اس کے لئے اور کیا اقدامات کئے جا سکتے ہیں؟۔ اس کے ساتھ ہی یہ کمیٹی بینکوں میں ہونے والے مختلف آڈٹوں کے کردار اور اس کے اثرات کی بھی جانچ کرے گی۔
ریزرو بینک نے بتایا کہ پی این بی گھوٹالہ کے پیش نظر اس نے آج ایک بار پھر تمام بینکوں کو بینکاری لین دین کے بارے میں اپنی خفیہ ہدایات پر سختی سے عمل کرنے کے لئے کہا ہے۔اس نے اس کے لئے بینکوں کو ایک مقررہ وقت بھی دیا ہے۔ اس نے بتایا کہ اگست 2016 سے کم از کم تین بار ان ہدایات کو نافذکرنے کے لئے بینکوں سے کہا گیا تھا، لیکن یہ پتہ چلا ہے کہ بینکوں کی جانب سے انہیں مکمل طور پر نافذ نہیں کیا گیا ہے۔
First published: Feb 21, 2018 09:30 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading