ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

سماج وادی پارٹی تنازعہ: مفاہمت کی راہ ہموار، اکھلیش اور ملائم کی ملاقات میں اعظم خان کا اہم رول

وزیر اعلی اکھلیش یادو نے اپنے والد اور پارٹی کے صدر ملائم سنگھ یادو سے آج ملاقات کی۔

  • UNI
  • Last Updated: Dec 31, 2016 03:13 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
سماج وادی پارٹی تنازعہ: مفاہمت کی راہ ہموار، اکھلیش اور ملائم کی ملاقات میں اعظم خان کا اہم رول
پی ٹی آئی

لکھنؤ۔ اترپردیش میں حکمراں سماج وادی پارٹی کا داخلی جھگڑا تقریباً ختم ہوگیا ہے۔ وزیر اعلی اکھلیش یادو نے اپنے والد اور پارٹی کے صدر ملائم سنگھ یادو سے آج ملاقات کی۔ ریاستی وزیر محمد اعظم خاں نے اسمبلی انتخابات سے عین پہلے بظاہر فیملی اور پارٹی کو متحد رکھنے میں اہم رول ادا کیا ہے ۔ خان نے ملائم سنگھ سے تقریباً ایک گھنٹہ بات چیت کرنے کے بعد وزیر اعلی اکھلیش یادو کو ان کے والد سے ملوانے لے گئے جہاں وہ پارٹی کے ارکان اسمبلی اور وزیر کے ساتھ بات چیت کر رہے تھے ۔ باپ بیٹے کی ملاقات کے دوران ہی شیوپال سنگھ یادو کو بھی  ملائم سنگھ نے طلب کرلیا تھا۔


کہا جاتا ہے کہ  اعظم خان نے  اکھیلیش اور ملائم دونوں کو پارٹی کےحق میں مسلم ووٹوں کے بری طرح متاثرہونے کا اندیشہ دکھا کر مفاہمت کی طرف بڑھنے کی تحریک دی۔ ملاقات کےدوران ملائم سنگھ کے بارےمیں بتایا جاتا ہے کہ وہ اپنے بیٹے سے یہ کہتے ہوئےجذباتی ہوگئےتھے ’’میں نے تمہیں وزیراعلی بنایا اور اب تم ہی میرے خلاف جا رہے ہو، میں نے تو کبھی تمہارے مطالبات پر کوئی اعتراض نہیں کیا‘‘۔ ہر چند کہ ابھی میٹنگ کی تفصیلات سامنے نہیں آئی ہیں لیکن تقریباً ایک گھنٹے کی اس میٹنگ کے بارے میں ذرائع کا کہنا ہے کہ تین معاملات زیر غور آئے ۔اول یہ کہ اکھیلیش چاہتے تھے کہ امر سنگھ کو پارٹی سے باہر نکالا جائے جبکہ ان کے حامیوں کو امیدواروں کی فہرست میں جگہ دی جائے،یہ مطالبہ بھی کیا گیا کہ اکھیلیش کو پارٹی کا صدر یا رابطہ کار بنا یا جائے۔


سمجھا جاتا ہے کہ رام گوپال یادو نے اکھلیش کیمپ کی طرف سے مندوبین کی جو ہنگامی میٹنگ طلب کی تھی وہ منسوخ کردی جائےگی۔ بہار کے سابق وزیراعلی اور آرجے ڈی کے صدر لالو پرساد یادو نے بھی اختلافات ختم کرانے کےلئے ملائم اور اکھیلیش سے بات کی ہے۔ واضح رہے کہ لالو ملائم کے قریبی رشتہ دار ہیں۔

First published: Dec 31, 2016 03:13 PM IST