உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    سیکس سی ڈی سانحہ میں پھنسے سندیپ کمار نے ڈی سی پی دفتر میں کی خود سپردگی، ریپ کا کیس درج

    سندیپ نے بیرونی دہلی کے ڈپٹی کمشنر دفتر میں خود کو سرینڈر کر دیا ہے۔

    سندیپ نے بیرونی دہلی کے ڈپٹی کمشنر دفتر میں خود کو سرینڈر کر دیا ہے۔

    سندیپ نے بیرونی دہلی کے ڈپٹی کمشنر دفتر میں خود کو سرینڈر کر دیا ہے۔

    • IBN Khabar
    • Last Updated :
    • Share this:

      نئی دہلی۔ سیکس سی ڈی سانحہ میں ملزم سندیپ کمار نے سرینڈر کر دیا ہے۔ سندیپ نے بیرونی دہلی کے ڈپٹی کمشنر دفتر میں خود کو سرینڈر کر دیا ہے۔ تاہم سندیپ پہلے یہ کہتے رہے کہ جو سی ڈی میں نظر آ رہا ہے وہ میں ہوں ہی نہیں لیکن اب سندیپ نے ڈپٹی کمشنر دفتر پہنچ کر سرینڈر کر دیا۔ فی الحال پولیس نے سندیپ کے اوپر آئی پی سی سیکشن 376، 328 کے تحت دفعہ لگائی ہے۔


      وہیں سندیپ کمار کے اوپر آئی ٹی سیکشن کے تحت بھی مقدمہ درج کیا گیا ہے، اس دوران ڈی سی پی آفس میں کرائم برانچ کے افسران بھی موجود تھے۔ بتا دیں کہ سیکس سی ڈی سامنے آنے کے بعد وزیر کے عہدے سے برخاست کئے گئے سندیپ کمار کو عام آدمی پارٹی سے نکال دیا گیا ہے۔ وہیں سیکس سی ڈی میں سندیپ کمار کے ساتھ نظر آنے والی عورت ایک این جی او کارکن کے ساتھ سلطان پوری تھانے میں شکایت درج کروانے بھی پہنچی۔


      شکایت کرنے پہنچی خاتون کا الزام ہے کہ یہ سیکس سی ڈی سندیپ کمار کے وزیر بننے کے بعد کی ہے۔ خاتون کا الزام ہے کہ سلطان پوری میں گھر خریدنے کے بعد وہ وہاں شفٹ ہوئی تھی۔ نئی جگہ ہونے کی وجہ سے وہ سندیپ کمار سے راشن کارڈ بنوانے کے لئے ملی تھی۔ عورت کے مطابق جب وہ سندیپ کمار کے دفتر میں ان سے ملنے پہنچی تو اسے اندر بیٹھا دیا گیا۔

      First published: