ہوم » نیوز » امراوتی

ڈارجیلنگ میں سی آر پی ایف کا پڑاؤ آٹھ مارچ تک: سپریم کورٹ

گورکھا لینڈ جن مکتی مورچہ کے بوال کے پس منظر میں سپریم کورٹ نے آج کلکتہ ہائی کورٹ کے اس حکم کو مسترد کردیا، جس میں دارجیلنگ اور کلیمپونگ علاقے میں سی آر پی ایف کے اضافے دستے کی تعیناتی کا حکم دیا گیا ہے۔

  • UNI
  • Last Updated: Feb 22, 2018 12:01 AM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
ڈارجیلنگ میں سی آر پی ایف کا پڑاؤ آٹھ مارچ تک: سپریم کورٹ
سپریم کورٹ: فائل فوٹو۔

نئی دہلی۔ گورکھا لینڈ جن مکتی مورچہ کے بوال کے پس منظر میں سپریم کورٹ نے آج کلکتہ ہائی کورٹ کے اس حکم کو مسترد کردیا، جس میں دارجیلنگ اور کلیمپونگ علاقے میں سی آر پی ایف کے اضافے دستے کی تعیناتی کا حکم دیا گیا ہے۔

عدالت عظمی نے کہا کہ علاقے میں سی آر پی ایف کی صرف چار کمپنیاں آٹھ مارچ تک تعینات رہيں گی۔

چیف جسٹس دیپک مشرا اور جسٹس ایے ایم کھانویلکر نیز ڈی وائی چندر چوڑ کی بنچ نے یہ حکم دیا ۔ خیا ل رہے کہ دارجیلنگ کے تشدد زدہ علاقے سے مرکزی حکومت نے فوج ہٹانے کا فیصلہ کیا تھا، جس پر مغربی بنگال حکومت نے کلکتہ ہائی کورٹ سے حکم امتناع حاصل کرلیا تھا۔ جس کے بعد مرکزی حکومت نے سپریم کورٹ کا رخ کیا تھا۔ سپریم کورٹ نے آج مرکزی حکومت کی درخواست پر سماعت کے بعد سی آر پی ایف کی بقیہ چار کمپنیوں کو آٹھ مارچ تک ہٹانے کی اجازت دے دی۔

First published: Feb 22, 2018 12:01 AM IST