உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    UPSC: کسان کےبیٹےسمیت جموں سے7نوجوان سول سروسزمیں کامیاب، کشمیرڈویژن سےایک بھی نہیں!

    نوجوان اسرار احمد کچلو نے 287 واں رینک حاصل کیا۔

    نوجوان اسرار احمد کچلو نے 287 واں رینک حاصل کیا۔

    محمد شبیر کے والد غلام محمد نے نیوز 18 سے بات کرتے ہوئے کہا کہ ان کا خواب پورا ہو گیا ہے۔ انہوں نے کہا ’’میں نے اپنے بچوں کو پونچھ اس لیے منتقل کیا کیونکہ میں انہیں عسکریت پسندی کے اثرات سے بچانا اور اچھے شہری بننا چاہتا تھا۔ میں نے شبیر کی تعلیم کے لیے اپنی تمام تر کوششیں لگا دی ہیں۔ کئی بار مجھے اپنے بچوں کے اخراجات پورے کرنے کے لیے مزدوری کرنا پڑی۔

    • Share this:
      منوج کول

      پونچھ ضلع سے تعلق رکھنے والے محمد شبیر گورسی میں جموں و کشمیر کے جموں ڈویژن کے سات نوجوانوں میں شامل ہیں جنہوں نے سول سروسز کے امتحان میں کامیابی حاصل کی، جس کا نتیجہ 30 مئی 2022 کو سامنے آیا۔ ایک پسماندہ گاؤں میں پیدا ہوئے محمد شبیر گورسی نے اپنی ابتدائی تعلیم ضلع پونچھ کے بچیاں والی میں حاصل کی۔

      محمد شبیر گورسی کے والد کے مطابق محمد جو کہ پیشے کے اعتبار سے ایک کسان ہیں، ان دنوں گاؤں میں دہشت گردوں کی آمدورفت رہتی تھی، انھوں نے اپنے بچوں کو مزید تعلیم حاصل کرنے کے لیے پونچھ شہر میں شفٹ کیا۔ شبیر نے جموں یونیورسٹی سے بیچلر کی ڈگری مکمل کی اور علی گڑھ مسلم یونیورسٹی سے ماسٹرز کیا۔ اب جب محمد شبیر نے سول سروسز کے امتحان میں کامیابی حاصل کی ہے تو پورا گاؤں ان پر فخر محسوس کر رہا ہے۔

      وہ اپنے اہل خانہ کے ساتھ کامیابی کا جشن مناتے ہیں۔ محمد شبیر کے والد غلام محمد نے نیوز 18 سے بات کرتے ہوئے کہا کہ ان کا خواب پورا ہو گیا ہے۔ انہوں نے کہا ’’میں نے اپنے بچوں کو پونچھ اس لیے منتقل کیا کیونکہ میں انہیں عسکریت پسندی کے اثرات سے بچانا اور اچھے شہری بننا چاہتا تھا۔ میں نے شبیر کی تعلیم کے لیے اپنی تمام تر کوششیں لگا دی ہیں۔ کئی بار مجھے اپنے بچوں کے اخراجات پورے کرنے کے لیے مزدوری کرنا پڑی۔ میں خدا کا شکر ادا کرتا ہوں کہ میرا خواب پورا ہو گیا ہے۔

      محمد شبیر کی بہن رضیہ بی کا کہنا ہے کہ ان کے بھائی نے اس باوقار امتحان میں کامیابی حاصل کرکے علاقے کا سر فخر سے بلند کیا ہے۔ شبیر نے پہلی کوشش میں سول سروسز کے امتحان میں کامیابی حاصل کی ہے اور 419 واں رینک حاصل کیا ہے۔ جموں ڈویژن کے چھ دیگر نوجوانوں نے سول سروسز امتحان 2022 میں کامیابی حاصل کی۔ ڈوڈہ ضلع کے ٹھٹھری علاقے سے تعلق رکھنے والے انجیت سنگھ نامی نوجوان نے فائنل لسٹ میں 550 واں نمبر حاصل کیا۔ جموں و کشمیر UT کے بھدرواہ علاقے سے تعلق رکھنے والے ایک اور نوجوان اسرار احمد کچلو نے 287 واں رینک حاصل کیا۔

      مزید پڑھیں: مسلم Dead Body کو محفوظ رکھنے کے یہ طریقے کئے جا رہے ہیں استعمال

      اس سال اس باوقار امتحان میں کامیابی حاصل کرنے والے چار دیگر نوجوانوں کا تعلق جموں و کشمیر کے جموں ضلع سے ہے۔

      مزید پڑھیں: عمران پرتاپ گڑھی کو راجیہ سبھا بھیجنے کی وجہ سے کانگریس میں بغاوت! مہاراشٹر کے لیڈر نے سونیا گاندھی کو بھیجا استعفیٰ

      جموں ضلع کے نوجوان جنہوں نے سول سروسز کے امتحان میں کامیابی حاصل کی وہ ہیں: جموں سے نمنیت سنگھ (436 ویں رینک)، کنجوانی جموں سے شیوانی جنگلال (300 ویں رینک) تریکوتہ نگر جموں سے پرتھ گپتا (72 ویں رینک) اور دوارکا گاندھی (412 ویں رینک) بشنہ جموں۔ خاص طور پر کشمیر ڈویژن سے کوئی بھی امیدوار سول سروسز امتحان 2022 میں کوالیفائی نہیں کر سکا۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: