ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

جموں وکشمیر: شاہ فیصل بنائیں گے نئی پارٹی، الیکشن کمیشن میں داخل کی عرضی

شاہ فیصل نے 8 سال پہلے سول سروسز امتحانات میں ملکی سطح پر اول پوزیشن حاصل کر کے تہلکہ مچا دیا تھا لیکن گزشتہ 9 جنوری کو جب انہوں نے اپنے عہدے سے مستعفی ہو کر سیاست میں جانے کا اعلان کیا تو اس اعلان نے اور بڑا تہلکہ مچا دیا

  • Share this:
جموں وکشمیر: شاہ فیصل بنائیں گے نئی پارٹی، الیکشن کمیشن میں داخل کی عرضی
شاہ فیصل: فائل فوٹو

جموں وکشمیر کے شاہ فیصل نے کہا ہے کہ وہ جلد ہی اپنی نئی سیاسی پارٹی لانچ کرنے والے ہیں۔ این ڈی ٹی وی کے مطابق، شاہ فیصل نے نئی پارٹی بنانے کو لے کر الیکشن کمیشن میں عرضی داخل کر دی ہے۔ جلد ہی الیکشن کمیشن سے انہیں پارٹی کا نشان مل جائے گا۔ شاہ فیصل نے 2010 میں یو پی ایس سی امتحان میں ٹاپ کیا تھا۔

خیال رہے کہ شاہ فیصل نے 8 سال پہلے سول سروسز امتحانات میں ملکی سطح پر اول پوزیشن حاصل کر کے تہلکہ مچا دیا تھا  لیکن گزشتہ 9 جنوری کو جب انہوں نے اپنے عہدے سے مستعفی ہو کر سیاست میں جانے کا اعلان کیا تو اس اعلان نے اور بڑا تہلکہ مچا دیا۔ 36 سالہ شاہ فیصل سرینگر سے شمال کی جانب 120 کلومیٹر کی دوری پر واقع علاقے لولاب میں پیدا ہوئے۔


ان کا بچپن کشمیر میں ملٹینسی کے عروج کے دور میں گزرا۔ ان کے والد ایک استاد تھے جنہیں نامعلوم مسلح افراد نے 25 سال پہلے قتل کر دیا تھا۔ لولاب ضلع کپواڑہ کا دور افتادہ علاقہ ہے۔ شاہ فیصل پہلے ڈاکٹر بنے اور بعد میں آئی اے ایس آفیسر لیکن ان کے دل میں ہمیشہ جموں وکشمیر کے حالات کا درد رہا۔


ساتھ ہی مرکزی حکومت کے ذریعہ کشمیر مسئلہ سے نمٹنے کے طریقے سے بھی وہ ناراض تھے۔ شروع سے ہی وہ اس معاملہ پر اپنی ناراضگی کا اظہار کرتے رہے۔ انہوں نے فیس بک اور ٹوئٹر کے ذریعہ اپنے دل کی بھڑاس نکالی۔


 


 
First published: Feb 26, 2019 10:11 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading