ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

دہلی میں ہارر کلنگ: لڑکی نے کی لو میرج تو گھر والوں نے اتارا موت کے گھاٹ، 6 گرفتار

راجدھانی دہلی کے نیو اشوک نگر میں ہارر کلنگ (Horror Killing) کا ایک معاملہ سامنے آیا ہے جس میں 25 سالہ لڑکی کی گلا گھونٹ کر قتل (Murder) کردیا گیا۔ اس معاملے میں گھر والوں کے 6 لوگوں کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔

  • Share this:
دہلی میں ہارر کلنگ: لڑکی نے کی لو میرج تو گھر والوں نے اتارا موت کے گھاٹ، 6 گرفتار
راجدھانی دہلی کے نیو اشوک نگر میں ہارر کلنگ (Horror Killing) کا ایک معاملہ سامنے آیا ہے جس میں 25 سالہ لڑکی کی گلا گھونٹ کر قتل (Murder) کردیا گیا۔ اس معاملے میں گھر والوں کے 6 لوگوں کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔

نئی دہلی: راجدھانی دہلی کے نیو اشوک نگر میں ہارر کلنگ (Horror Killing) کا ایک معاملہ سامنے آیا ہے جس میں 25 سالہ لڑکی کی گلا گھونٹ کر قتل (Murder) کردیا گیا۔ اس معاملے میں گھر والوں کے 6 لوگوں کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔ پولیس نے بتایا کہ لڑکی کی پہچان شیتل چودھری کے طور پر ہوئی ہے۔ معاملے میں جمعے کولڑکی کے والد رویندر، ماں سمن، انکل سنجے، اووم پرکاش، پھوپھا زاد بھائی پرویش اور رشتے داری میں ہی لگنے والا ایک دیگر داماد انکت کو گرفتار کیا گیا ہے۔

پولیس لے مطابق لڑکی کا پڑوس کے ہی ایک شخص کے ساتھ گزشتہ تین سالوں سے پیار و محبت کا رشتہ تھا۔ بعد میں انہوں نے گھر میں بغیر بتائے آریہ سماج مندر میں اکتوبر 2019 میں شادی بھی کرلی تھی۔ کافی سمجھانے پر بھی وہ شادی توڑنے کیلئے تیار نہیں ہوئی تو گھر والوں نے اس کے قتل کا منصوبہ بنایا اور 30 جنوری کو واردات کو انجام دے ڈالا۔ بعد میں لڑکی کی لاش کو علی گڑھ کی ایک نہر میں پھینک دیا۔

جب لڑکی کے شوہر نے اسے فون کیا تو اس کا فون سوئچ آف آیا جس کے چلتے اس نے نیو اشوک نگر تھانے میں گمشدگی کی رپورٹ درج کرائی۔ پولیس نے جب شیتل کے گھر والوں سے پچھ۔گچھ کی تو انہوں نے یہ کہہ کر ٹال دیا کہ وہ اپنے کسی رشتے دار کے یہاں گئی ہے لیکن وہ وہاں بھی نہیں ملی۔ جب پولیس کو شک ہوا تو انہوں نے گھروالوں کی کال ڈٹیل نکالی۔ کال ڈٹیل میں کچھ نمبروں پر 30 جنوری کے آس۔پاس ہی کافی بات ہوئی تھی۔ جن۔جن نمبروں پر لڑکی کے والدین کی زیادہ بات ہوئی تھی، ان سبھی کو الگ۔الگ کرکے پولیس نے پوچھ۔گچھ کی پہلے تو سبھی نے معاملے کو ٹالنے کی کوشش کی لیکن بعد میں وہ ٹوٹ گئے اور سب سچ اگل دیا۔

First published: Feb 22, 2020 08:39 AM IST