உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    India Gate پرلگایاجائےگاSubhas Chandra Boseکاعظیم الشان مجسمہ: پی ایم مودی

    وزیر اعظم نریندر مودی نے نیتا جی کے مجسمے کی تصویر ٹویٹ کر کے یہ جانکاری دی ہے۔ انہوں نے کہا کہ جب تک نیتا جی بوس کا عظیم الشان مجسمہ تیار نہیں ہو جاتا، ان کا ہولوگرام مجسمہ اسی جگہ موجود رہے گا۔ میں 23 جنوری کو نیتا جی کی یوم پیدائش پر ہولوگرام مجسمہ کی نقاب کشائی کروں گا۔

    وزیر اعظم نریندر مودی نے نیتا جی کے مجسمے کی تصویر ٹویٹ کر کے یہ جانکاری دی ہے۔ انہوں نے کہا کہ جب تک نیتا جی بوس کا عظیم الشان مجسمہ تیار نہیں ہو جاتا، ان کا ہولوگرام مجسمہ اسی جگہ موجود رہے گا۔ میں 23 جنوری کو نیتا جی کی یوم پیدائش پر ہولوگرام مجسمہ کی نقاب کشائی کروں گا۔

    وزیر اعظم نریندر مودی نے نیتا جی کے مجسمے کی تصویر ٹویٹ کر کے یہ جانکاری دی ہے۔ انہوں نے کہا کہ جب تک نیتا جی بوس کا عظیم الشان مجسمہ تیار نہیں ہو جاتا، ان کا ہولوگرام مجسمہ اسی جگہ موجود رہے گا۔ میں 23 جنوری کو نیتا جی کی یوم پیدائش پر ہولوگرام مجسمہ کی نقاب کشائی کروں گا۔

    • Share this:
      وزیراعظم نریندر مودی (PM Modi) نے اعلان کیا ہے کہ نیتا جی سبھاش چندر بوس (Subhas Chandra Bose) کا عظیم مجسمہ دہلی کے انڈیا گیٹ (India Gate)پر نصب کیا جائے گا۔ وزیر اعظم نریندر مودی نے نیتا جی کے مجسمے کی تصویر ٹویٹ کر کے یہ جانکاری دی ہے۔ انہوں نے کہا کہ جب تک نیتا جی بوس کا عظیم الشان مجسمہ تیار نہیں ہو جاتا، ان کا ہولوگرام مجسمہ اسی جگہ موجود رہے گا۔ میں 23 جنوری کو نیتا جی کی یوم پیدائش پر ہولوگرام مجسمہ کی نقاب کشائی کروں گا۔ انہوں نے مزید کہا، 'ایک ایسے وقت میں جب پورا ملک نیتا جی سبھاش چندر بوس کی 125ویں یوم پیدائش منا رہا ہے۔ مجھے یہ بتاتے ہوئے خوشی ہو رہی ہے کہ انڈیا گیٹ پر گرینائٹ سے بنا ان کا عظیم الشان مجسمہ نصب کیا جائے گا۔'


      کانگریس نے جمعہ کو امر جوان جیوتی کے شعلے کو قومی جنگی یادگار پر جلنے والے شعلے کے ساتھ ملانے کا الزام لگایا اور الزام لگایا کہ یہ اقدام فوجیوں کی قربانیوں کی تاریخ کو مٹانے کے مترادف ہے۔ پارٹی کے سابق صدر راہول گاندھی نے ٹویٹ کیا، 'یہ بہت افسوسناک ہے کہ امر جیوتی جو ہمارے بہادر سپاہیوں کے لیے جلتی تھی، آج بجھ جائے گی۔ کچھ لوگ حب الوطنی اور قربانی کو نہیں سمجھ سکتے، کوئی مسئلہ نہیں۔ ہم اپنے سپاہیوں کے لیے امر جوان جیوتی کو ایک بار پھر روشن کردیں گے ۔

      اس فیصلے پر کانگریس نے مرکزی حکومت کو گھیرا

      وہیں کانگریس لیڈر منیش تیواری نے بھی مرکزی حکومت پر الزام لگاتے ہوئے کہا کہ 'امر جوان جیوتی کو بجھانا اس تاریخ کو مٹانے کے مترادف ہے جو 3483 بہادر فوجیوں کی قربانی کی نشانی ہے جنہوں نے پاکستان کو دو حصوں میں تقسیم کیا اور جنوبی ایشیا کا نقشہ بدل دیا۔ انہوں نے کہا کہ یہ بہت ستم ظریفی ہے کہ بنگلہ دیش کی آزادی کی جنگ کے 50 سال مکمل ہونے کے موقع پر حکومت آزادی کے بعد کے بہترین لمحے کو مٹانے کی کوشش کر رہی ہے۔


      حکومت ہند نے دیاجواب

      امر جوان جیوتی، جو قومی راجدھانی کے انڈیا گیٹ پر پچھلے 50 سالوں سے جل رہی ہے، جمعہ کو قومی جنگی یادگار میں جلتی ہوئی شعلے کے ساتھ مل جائے گی۔ حکومتی ذرائع کا کہنا ہے کہ یہ دیکھ کر عجیب بات ہے کہ امر جوان جیوتی کے شعلے کا مقصد 1971 اور دیگر جنگوں کے شہیدوں کو خراج عقیدت پیش کرنا ہے لیکن ان میں سے کوئی بھی نام وہاں موجود نہیں ہے۔

      حکومتی ذرائع نے یہ بھی بتایا کہ پہلی جنگ عظیم اور اینگلو افغان جنگ میں برطانوی حکومت کے لیے لڑنے والے کچھ شہداء کے نام انڈیا گیٹ پر کندہ ہیں اور اس طرح یہ ہمارے نوآبادیاتی ماضی کی علامت ہے۔ بی جے پی کے ترجمان سمبیت پاترا نے ٹویٹ کیا، ’’امر جوان جیوتی کے حوالے سے کئی طرح کی غلط معلومات پھیلائی جا رہی ہیں۔ صحیح بات یہ ہے کہ امر جوان جیوتی کا شعلہ بجھ نہیں رہا ہے۔ اسے قومی سمر میموریل کے شعلے کے ساتھ ملایا جا رہا ہے۔


      امر جوان جیوتی 1971 کی پاک بھارت جنگ میں شہید ہونے والے بھارتی فوجیوں کی یاد میں قائم کی گئی تھی۔ اس جنگ میں ہندوستان کی فتح ہوئی اور بنگلہ دیش بنا۔ اس کا افتتاح 26 جنوری 1972 کو اس وقت کی وزیر اعظم اندرا گاندھی نے کیا تھا۔
      Published by:Mirzaghani Baig
      First published: