ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

اروناچل پردیش : کانگریس کا نیا داؤ ، نبام تكی کی جگہ پیما كھانڈو

تازہ معلومات کے مطابق اروناچل پردیش کو لے کر کانگریس نے نئی حکمت عملی بنائی ہے ۔ سابق وزیر اعلی پیما كھانڈو کو کانگریس نے پارٹی اراکین کا لیڈر بنایا ہے

  • Pradesh18
  • Last Updated: Jul 16, 2016 11:08 AM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
اروناچل پردیش : کانگریس کا نیا داؤ ، نبام تكی کی جگہ پیما كھانڈو
تازہ معلومات کے مطابق اروناچل پردیش کو لے کر کانگریس نے نئی حکمت عملی بنائی ہے ۔ سابق وزیر اعلی پیما كھانڈو کو کانگریس نے پارٹی اراکین کا لیڈر بنایا ہے

نئی دہلی : اروناچل پردیش میں آج کا دن سیاسی گہما گہمی کا ہے ۔ سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد اروناچل میں کانگریس کے باغی كالیكھو پل کی حکومت ختم ہونے کے بعد آج دوپہر وہاں اکثریت ثابت کیاجائے گا ۔  سپریم کورٹ کے حکم پر دوبارہ بحال ہوئے وزیر اعلی نبام تكی کو اکثریت ثابت کرنا ہے ۔ اگرچہ تازہ معلومات کے مطابق اروناچل پردیش کو لے کر کانگریس نے نئی حکمت عملی بنائی ہے ۔ سابق وزیر اعلی پیما كھانڈو کو کانگریس نے پارٹی اراکین کا لیڈر بنایا ہے ۔


اروناچل پردیش کے گورنر کی جانب سے تكی کو اکثریت ثابت کرنے کو کہا گیا ہے ۔ گورنر کے اس حکم کے بعد سے اروناچل کے دارالحکومت میں اسمبلی کے ارد گرد دفعہ 144 نافذ کردیا گیا ہے ۔


واضح رہے کہ اس سے پہلے سپریم کورٹ نے اروناچل پردیش میں کانگریس کی حکومت بحال کرنے کا حکم دیا اور کہا کہ پہلے کی صورتحال قائم کی جانی چاہئے ۔ اسی درمیان اروناچل پردیش کانگریس میں ایک بڑی تبدیلی کرتے ہوئے اروناچل حکومت میں وزیر سیاحت پیما كھانڈو کو پارٹی اراکین کا لیڈر بنا دیا گیا ہے ۔

First published: Jul 16, 2016 11:08 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading