ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

سپریم کورٹ کی سیاسی پارٹیوں کو ہدایت، مجرمانہ پس منظر والے امیدواروں کی معلومات اپنی ویب سائٹ پر دیں

جسٹس آر ایف نریمن اور جسٹس ایس روندر بھٹ کی بنچ نے بی جے پی لیڈر اشونی کمار اپادھیائے اور رام بابو شرما کی توہین عدالت کی درخواست پر یہ حکم دیا۔

  • UNI
  • Last Updated: Feb 13, 2020 12:13 PM IST
  • Share this:
سپریم کورٹ کی سیاسی پارٹیوں کو ہدایت، مجرمانہ پس منظر والے امیدواروں کی معلومات اپنی ویب سائٹ پر دیں
کاشی ۔ متھرا تنازعہ: ہندو تنظیم کے بعد جمعیتہ علماء ہند نے بھی سپریم کورٹ کا دروازہ کھٹکھٹایا۔

نئی دہلی۔ سپریم کورٹ نے ایک اہم فیصلے میں سیاسی پارٹیوں کو جمعرات کو ہدایت دی کہ وہ مجرمانہ پس منظر والے امیدواروں کی فہرست اور منتخب ہونے کا سبب اپنی اپنی ویب سائٹس پر اپ لوڈ کریں۔ جسٹس آر ایف نریمن اور جسٹس ایس روندر بھٹ کی بنچ نے بی جے پی لیڈر اشونی کمار اپادھیائے اور رام بابو شرما کی توہین عدالت کی درخواست پر یہ حکم دیا۔ عدالت نے ان ہدایات پر عمل نہ کئے جانے پر الیکشن کمیشن کو اس بات کی اجازت دی ہے کہ وہ سیاسی پارٹیوں کے خلاف یہ معلومات عدالت کو آگاہ کرائے۔



سیاست کے جرائم زدہ ہونے سے روکنے کے لئے عدالت نے سیاسی پارٹیوں کے لئے گائیڈلائن جاری کی ہے۔ عدالت عظمیٰ نے کہا کہ گزشتہ چار عام انتخابات میں سیاست میں جرائم تیزی سے بڑھے ہیں۔ اس کے مطابق، اگر سیاسی پارٹیوں کی طرف سے مجرمانہ پس منظر کے شخص کو ٹکٹ دیا جاتا ہے تو اس کے جرائم کی تفصیلات پارٹی کی ویب سائٹ پر اور سوشل میڈیا پر دینی ہوگی۔ ساتھ ہی انہیں یہ بھی بتانا ہوگا کہ کسی بے داغ کو ٹکٹ کیوں نہیں دیا گیا؟

عدالت عظمی نے امیدواروں پر درج فوجداری مقدمات کی معلومات اخبارات، نيوز چینلز اور سوشل میڈیا پر بھی نامزدگی کلیئر ہونے کے 48 گھنٹوں کے اندر شائع کرنے کو کہا ہے۔ اگر سیاسی پارٹی ایسا نہیں کرتی ہے تو الیکشن کمیشن اس کی معلومات سپریم کورٹ کو دے گا۔
First published: Feb 13, 2020 12:13 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading