ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

آپ اکیلے نہیں ہیں بیمار! دہلی۔NCR  میں زہریلی ہوا سے 73 فیصد گھروں میں کم از کم 1 ممبر کی طبیعت خراب: سروے

سروے کے مطابق زہریلی ہوا کے چلتے لوگ سردی، زکام گلے میں خراش اور آنکھوں میں جلن کی شکایت کر رہے ہیں۔ اس کے علاوہ خراب ہوا کے چلتے لوگوں کو سانس لینے میں بھی دقت ہو رہی ہے۔ کئی لوگوں میں اس سے پھیپھڑوں کا کینسر ہونے کا بھی خطرہ بنا رہتا ہے۔

  • Share this:
آپ اکیلے نہیں ہیں بیمار! دہلی۔NCR  میں زہریلی ہوا سے 73 فیصد گھروں میں کم از کم 1 ممبر کی طبیعت خراب: سروے
دہلی این سی آر NCR میں فضائی آلودگی

دہلی این سی آر NCR میں فضائی آلودگی (Air Pollution) بیحد خطرناک سطح پر پہنچ گیا ہے۔ کئی علاقوں میں ایئر کوالٹی انڈیکس (AQI) نو سو کے پار پہنچ گیا ہے۔ 310-400 AQI کی سطح ہی صحت کے لئے بیحد خراب مانا جاتا ہے۔ ایسے میں دیوالی سے پہلے دہلی، گروگرام، غازی آباد، نوئیڈا اور فریدآباد میں زہریلی ہوا کا اثر لوگوں پر نظر آنے لگا ہے۔ ایک سروے کے مطابق یہاں کے تقریبا 73 فیصدی گھروں میں کوئی نہ کوئی شخص بیمار ہے۔

لوگوں کو کئی طرح کی دقتیں

سروے کے مطابق زہریلی ہوا کے چلتے لوگ سردی، زکام گلے میں خراش اور آنکھوں میں جلن کی شکایت کر رہے ہیں۔ اس کے علاوہ خراب ہوا کے چلتے لوگوں کو سانس لینے میں بھی دقت ہو رہی ہے۔ کئی لوگوں میں اس سے پھیپھڑوں کا کینسر ہونے کا بھی خطرہ بنا رہتا ہے۔ لوکل سرکلس (LocalCircles) نام کی کمپنی ٖجائی آلودگی سے ہو رہی دقتوں کو دیکھتے ہوئے یہ ایک سروے کیا ہے۔ اس کے ذریعے یہ پتہ لگانے کی کوشش کی گئی ہے کہ زہریلی ہوا کا کتنا اثر لوگوں پر پڑ رہا ہے۔


سروے میں اور کیا پایا گیا۔ اس سروے کے تحت دہلی این سی آر میں تقریبا 35 ہزار لوگوں سے سوال پوچھے گئے۔ اس کے تحت دہلی اور گروگرام کے 13 فیصد نوئیڈا اور غازی آباد 19 فیصد اور فرید آباد 17 فیصد لوگوں نے کہا کہ ان کے گھر کے کسی بھی ممبر کو فضائی آلودگی کا کوئی اثر نہیں پڑا ہے جبکہ 73 فیصدی گھروں کے لوگوں نے یہ کہا کہ ان کے یہاں کوئی نہ کوئی بیمار ہے۔ تقریبا دیڑھ ماہ پہلے ایک ایسا ہی سروے کیا گیا تھا۔ اس وقت کہا گیا تھا کہ 65 فیصدی گھروں میں زہریلی ہوا سے کوئی نہ کوئی بیمار ہے۔ یعنی حال کے دنوں میں زہریلی ہوا کا اثر کافی زیادہ بڑھ گیا ہے۔ دہلی میں اب 85 فیصدی لوگ کہہ رہے ہیں کہ ان کے گھروں میں کوئی نہ کوئی بیمار ہے۔

Published by: sana Naeem
First published: Nov 11, 2020 02:48 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading