உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    سشیل کمار نے کھٹکھٹایا کورٹ کا دروازہ ، نرسمہا یادو کے ساتھ مقابلہ کی مانگی اجازت

    نئی دہلی : سشیل کمار اور نرسمہا یادو کے اولمپك میں کشتی میں جانے کا معاملہ اب عدالت پہنچ گیا ہے ۔

    نئی دہلی : سشیل کمار اور نرسمہا یادو کے اولمپك میں کشتی میں جانے کا معاملہ اب عدالت پہنچ گیا ہے ۔

    نئی دہلی : سشیل کمار اور نرسمہا یادو کے اولمپك میں کشتی میں جانے کا معاملہ اب عدالت پہنچ گیا ہے ۔

    • IBN7
    • Last Updated :
    • Share this:
      نئی دہلی : سشیل کمار اور نرسمہا یادو کے اولمپك میں کشتی میں جانے کا معاملہ اب عدالت پہنچ گیا ہے ۔ پہلوان سشیل کمار نے ٹرائل کا مطالبہ کرتے ہوئے دہلی ہائی کورٹ کا دروازہ کھٹکھٹایا ہے۔ سشیل نے دہلی ہائی کورٹ میں عرضی داخل کر کے کہا ہے کہ انہیں ریو اولمپکس کے لئے ٹرائل کی اجازت دی جائے۔ سشیل نے اپنی درخواست میں کہا ہے کہ 74 کلو کے زمرہ کے لئے نرسمہا یادو کے ساتھ مقابلہ کی انہیں اجازت دی جائے۔
      دراصل 74 کلو گرام فری اسٹائل زمرہ میں پہلوان نرسمہا یادو نے ہندوستان کی جانب سے اولمپکس کے لئے کوالیفائی کیا ہے، لیکن سشیل کمار مطالبہ کر رہے ہیں کہ ان کے اور نرسمہا یادو کے درمیان ٹرائل میں جو جیتے، اس کو ریو اولمپکس میں حصہ لینے کا موقع ملنا چاہئے۔
      ادھر وزیر کھیل سربانند سونووال نے واضح کر دیا ہے کہ کشتی فیڈریشن نے اس معاملے میں فیصلہ کر لیا ہے۔ تاہم سشیل کے والد دیوان سنگھ کشتی فیڈریشن پر الزامات لگا رہے ہیں کہ وہ جان بوجھ کر سشیل کو اولمپکس میں نہیں جانے دے رہے ہیں۔
      First published: