உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    وزیر اعظم نریندرمودی کی سخت پھٹکار نے سبرامنیم سوامی کو فلسفی بنا دیا

    نئی دہلی۔  بی جے پی لیڈر سبرامنیم سوامی بار بار چوٹی کے افسروں پر حملے اور ساتھی سینئر پارٹی رہنماؤں جیسے وزیر خزانہ ارون جیٹلی کے استھزاء پر وزیر اعظم نریندر مودی کی طرف سے عوامی سطح پر دوٹوک اعتراض کے ایک دن بعد جیسے گمنامی میں چلے گئے۔

    نئی دہلی۔ بی جے پی لیڈر سبرامنیم سوامی بار بار چوٹی کے افسروں پر حملے اور ساتھی سینئر پارٹی رہنماؤں جیسے وزیر خزانہ ارون جیٹلی کے استھزاء پر وزیر اعظم نریندر مودی کی طرف سے عوامی سطح پر دوٹوک اعتراض کے ایک دن بعد جیسے گمنامی میں چلے گئے۔

    نئی دہلی۔ بی جے پی لیڈر سبرامنیم سوامی بار بار چوٹی کے افسروں پر حملے اور ساتھی سینئر پارٹی رہنماؤں جیسے وزیر خزانہ ارون جیٹلی کے استھزاء پر وزیر اعظم نریندر مودی کی طرف سے عوامی سطح پر دوٹوک اعتراض کے ایک دن بعد جیسے گمنامی میں چلے گئے۔

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:

      نئی دہلی۔  بی جے پی لیڈر سبرامنیم سوامی بار بار چوٹی کے افسروں پر حملے اور ساتھی سینئر پارٹی رہنماؤں جیسے وزیر خزانہ ارون جیٹلی کے استھزاء پر وزیر اعظم نریندر مودی کی طرف سے عوامی سطح پر دوٹوک اعتراض کے ایک دن بعد جیسے گمنامی میں چلے گئے۔ ذرائع ابلاغ سے بچ کر نکلتے ہوئے ڈاکٹر سوامی نے اپنے فیورٹ سوشل پلیٹ فارم سے گو یا ہوئے جہاں وہ تازہ سلسلے کے حوالے سے فلسفیانہ انداز اختیارکر لیا ہے۔


      مسٹر مودی کا انٹرویو نشر ہونے کے گھنٹوں بعد راجیہ سبھا کے رکن نے ٹوئیٹ کیا ہے کہ ’’ یہ دنیا بالعموم ایک ایسے توازن پر ہے جس میں ایک پیرامیٹر کی معمولی تبدیلی بھی تمام تبدیلیوں پر اثر انداز ہوتی ہے۔ کرشن نے اسی لئے سکھ دکھ ۔۔۔ کی بات کہی ہے ۔ ڈاکٹر سوامی نے بہر حال یہ واضح نہیں کیا کہ  انہوں نے کس تناظرمیں بھگوان کرشن کا ذکر کیا ہے۔


      ڈاکٹر سوامی کی خاموشی سے یہاں بی جے پی کے صدر دفتر میں راحت محسوس کی گئی ہے کیونکہ پارٹی کے ترجمانوں کو ان کی باتوں پر ہر دن استفسارات کا جواب دینے میں مشکل پیش آرہی تھی ۔ واضح رہے کہ ڈاکٹر سوامی کا نام لئے بغیر، وزیر اعظم نے کہا تھا کہ "یہ غیر مناسب ہے۔ میرا پیغام واضح ہے۔ اگر کوئی خود کو نظام سے اوپر سمجھتا ہے تو، وہ غلط ہے‘‘۔

      First published: