ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

فوجی اہلکاروں کے جسد خاکی کو بغیر تابوت لائے جانے کا معاملہ: فوج کی مستقبل میں ایسا نہ ہونے کی یقین دہانی

فوج نے کہا ہے کہ اروناچل پردیش میں ہیلی کاپٹر حادثے میں جان گنوانے والے فوجی اہلکاروں کے جسد خاکی کو دوردراز علاقے میں دستیاب محدود وسائل میں لپیٹ کر لایا جانا ایک غیر معمولی حالات کی وجہ سے ہوا اور مستقبل میں یقینی بنایا جائے گا کہ ایسےواقعے کا اعادہ نہ ہو۔

  • UNI
  • Last Updated: Oct 09, 2017 08:25 AM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
فوجی اہلکاروں کے جسد خاکی کو بغیر تابوت لائے جانے کا معاملہ: فوج کی مستقبل میں ایسا نہ ہونے کی یقین دہانی
شمالی فوج کے سابق کمانڈر لیفٹیننٹ جنرل( سبکدوش) ایچ ایس پناگ نے اس تصویر کو ٹویٹ کیا ہے۔

نئی دہلی۔  فوج نے کہا ہے کہ اروناچل پردیش میں ہیلی کاپٹر حادثے میں جان گنوانے والے فوجی اہلکاروں کے جسد خاکی کو دوردراز علاقے میں دستیاب محدود وسائل میں لپیٹ کر لایا جانا ایک غیر معمولی حالات کی وجہ سے ہوا اور مستقبل میں یقینی بنایا جائے گا کہ ایسےواقعے کا اعادہ نہ ہو۔ جمعہ کو اروناچل پردیش کے دوردراز علاقے میں ایک ہیلی کاپٹر حادثے میں جان کی قربانی دینے والے ایئر فورس اور فوج کے 7 فوجی اہلکار کے جسد خاکی کو بغیر تابوت کے وہاں دستیاب محدود وسائل میں لائے جانے کی تصویر سوشل میڈیا پر وائرل ہونے کے بعد اس پر سخت تنقید ہوئی تھی۔


فوج کے ذرائع کی طرف سے اب کہا گیا ہے کہ یہ واقعہ دوردراز علاقہ ہونے کی وجہ سے انتہائی غیر معمولی حالات میں وسائل کی عدم موجودگی میں ہوا ہے۔ فوج نے یہ بھی کہا ہے کہ مختلف واقعات میں جان گنوانے والے فوجیوں کو پورا فوجی احترام دیا جاتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہ یقینی بنایا جائے گا کہ مستقبل میں ایسا کوئی واقعہ نہ ہو۔

First published: Oct 09, 2017 08:25 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading