ہوم » نیوز » No Category

دو اکتوبر سے حج اورعمره پر دو ہزار ریال کے ٹیکس نفاذ معاملہ پر بریلوی علما کا اظہار تشویش

بریلی۔ سعودی عرب حکومت آئندہ دو اکتوبر سے حج اور عمره کرنے والے عازمین پر دو ہزار ریال کا ٹیکس لاگو کرنے جا رہی ہے ۔

  • ETV
  • Last Updated: Sep 24, 2016 05:55 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
دو اکتوبر سے حج اورعمره پر دو ہزار ریال کے ٹیکس نفاذ معاملہ پر بریلوی علما کا اظہار تشویش
بریلی۔ سعودی عرب حکومت آئندہ دو اکتوبر سے حج اور عمره کرنے والے عازمین پر دو ہزار ریال کا ٹیکس لاگو کرنے جا رہی ہے ۔

بریلی۔ سعودی عرب حکومت آئندہ دو اکتوبر سے حج اور عمره کرنے والے عازمین پر دو ہزار ریال کا ٹیکس لاگو کرنے جا رہی ہے ۔ اس کو لیکر بریلوی علما نے سخت تشویش ظاہر کی ہے۔  ان کا کہنا ہے کہ سب سے زیادہ تعداد میں ہندوستان سے مسلمان حج اور عمرہ کے لیے سعودی عرب جاتے ہیں، جن میں سے کافی کی مالی حالت کمزور ہوتی ہے اور وہ اس فریضہ کو ادا کرنے کے لیے اپنی زندگی بھر کی کمائی لگا دیتے ہیں ۔ اس لئے اس سے ان پر اثر پڑے گا۔ خانقاہ بریلی سے حافظ سعید کے خلاف فتوی جاری ہونے کے بعد اب سعودی عرب حکومت کے خلاف بھی فتویٰ جاری ہونے جا رہا ہے ۔ بریلی سے درگاہ اعلی حضرت کے علماء نے ایک میٹنگ کے بعد یہ فیصلہ لیا ہے۔


بریلی درگاہ اعلی حضرت کے علماء نے ایک میٹنگ میں سعودی حکومت کے ذریعہ نافذ ہونے والے ٹیکس کی جم کر مذمت کی ہے۔ آئندہ دواکتوبر سے سعودی حکومت عازمین حج اور عمره کرنے والوں کے اوپر ٹیکس لاگو کرنے جا رہی ہے۔ یہ ٹیکس دو ہزار ریال ہے جو ہندوستانی کرنسی کے حساب سے تقریباً 35 ہزار روپے ہے۔ اس کے خلاف بریلوی علماء نے سخت فیصلہ لیتے ہوئے حکومت ہند سے مطالبہ کیا ہے کہ اس ٹیکس کو نافذ ہونے سے پہلے فوراً روکا جائے۔ علماء نے یہ بھی فیصلہ لیا ہے کہ اگر سعودی حکومت اس ٹیکس کو ختم نہیں کرتی ہے تو اس کے خلاف ایک فتویٰ بھی جاری کیا جائے گا۔

First published: Sep 24, 2016 05:55 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading