உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    جہانگیر پوری میں انہدامی کارروائی پر سپریم کورٹ کی روک رہے گی برقرار، دوہفتوں کے بعد ہوگی سماعت

    جہانگیر پوری تشدد

    جہانگیر پوری تشدد

    سپریم کورٹ نے تمام درخواستوں پر نوٹس جاری کیا اور جہانگیر پوری میں انہدامی کارروائی پر روک کو برقرار رکھا۔ اب اس کیس کی اگلی سماعت دو ہفتے بعد سپریم کورٹ میں ہوگی۔ تاہم اس دوران سپریم کورٹ نے واضح کیا کہ روک کا حکم صرف دہلی کے لیے ہے۔ باقی ریاستیں اپنا جواب داخل کرسکتی ہیں اور پھر مزید سماعت ہوگی۔

    • Share this:
      نئی دہلی: 16 اپریل کو ہنومان جینتی کے موقع پر دہلی میں ہنومان جینتی کے موقع پر جہانگیر پوری علاقے میں تشدد کے معاملے میں مسلسل اپ ڈیٹس آ رہے ہیں۔ ہنومان جینتی پر تشدد کے بعد بدھ کو جہانگیرپوری میں ایم سی ڈی کے غیر قانونی قبضوں پر کی گئی کارروائی پر سپریم کورٹ میں آج یعنی جمعرات کو سماعت جاری ہے۔ سپریم کورٹ نے جہانگیرپوری کیس کو قومی مسئلہ ماننے سے انکار کردیا ہے، فی الحال عدالت میں بحث جاری ہے۔ اس سے قبل بدھ کو سپریم کورٹSupreme Court نے بلڈوزر کی کارروائی پر روک لگا دی تھی۔ دوسری طرف، ٹی ایم سی یعنی ترنمول کانگریس نے تشدد سے متاثرہ جہانگیرپوری علاقے میں فیکٹ فائنڈنگ ٹیم بھیجنے کا فیصلہ کیا ہے۔ ذرائع کی مانیں تو یہ ٹیم جمعہ کو جہانگیرپوری آئے گی۔ وہیں دہلی پولیس جہانگیرپوری تشدد کے ملزم کی کنڈلی کی جانچ کرنے بنگال پہنچ گئی ہے۔ تو آئیے جانتے ہیں جہانگیر پوری تشدد کیس سے متعلق تمام اپ ڈیٹس۔

      سپریم کورٹ نے تمام درخواستوں پر نوٹس جاری کیا اور جہانگیر پوری میں انہدامی کارروائی پر روک کو برقرار رکھا۔ اب اس کیس کی اگلی سماعت دو ہفتے بعد سپریم کورٹ میں ہوگی۔ تاہم اس دوران سپریم کورٹ نے واضح کیا کہ روک کا حکم صرف دہلی کے لیے ہے۔ باقی ریاستیں اپنا جواب داخل کرسکتی ہیں اور پھر مزید سماعت ہوگی۔

      جہانگیر پوری بلڈوزر معاملہ: سپریم کورٹ کی مداخلت کا ارشد مدنی نے کیاخیرمقدم، بولے! حتمی فیصلہ بھی مظلومین کے حق میں ہوگا انشاء اللہ۔




      جہانگیر پوری میں دہلی میونسپل کارپوریشن کی غیر قانونی تعمیرات پر کارروائی کو لے کر سپریم کورٹ Supreme Court میں سماعت جاری ہے۔ آپریشن بلڈوزر کے خلاف درخواست کے لیے حاضر ہوئے سینئر وکیل دشینت ڈیو نے عدالت کو بتایا کہ دہلی میں 731 غیر قانونی کالونیاں ہیں اور صرف ایک کو مخصوص کمیونٹی کو نشانہ بنانے کے لیے صرف ایک کو منتخب کیا گیا ہے۔ ڈیو نے کہا کہ پولیس کو استعمال کیا جا رہا ہے۔ بغیر اطلاع کے کارروائی کی گئی۔ عدالت نے اس معاملے کی سماعت دو ہفتے بعد کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ جہانگیرپوری میں انہدامی کارروائی پر روک کا حکم جاری رہے گا یعنی وہاں کوئی کارروائی نہیں کی جائے گی۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: