உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    'مختارعباس نقوی نے کہا 'موجودہ سیشن میں منظور کیا جائے تین طلاق بل

    مرکزی وزیر برائے اقلیتی امور مختار عباس نقوی: فائل فوٹو۔

    مرکزی وزیر برائے اقلیتی امور مختار عباس نقوی: فائل فوٹو۔

    اقلیتی امور کے مرکزی وزیر مختار عباس نقوی نے آج کہا کہ حکومت چاہتی ہے کہ تین طلاق مخالف بل پارلیمنٹ کے موجودہ سیشن میں ہی منظور کیا جائے۔

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:
      نئی دہلی۔اقلیتی امور کے مرکزی وزیر مختار عباس نقوی نے آج کہا کہ حکومت چاہتی ہے کہ تین طلاق مخالف بل پارلیمنٹ کے موجودہ سیشن میں ہی منظور کیا جائے۔محتار عباس نقوی نے آج یہاں نامہ نگاروں سے کہا کہ " ہماری کوشش ہے کہ تین طلاق (طلاق بدعت) بل پر راجیہ سبھا میں بحث ہو اور اگر اپوزیشن کی طرف سے کوئی ضروری ترمیم ہو تو اسے ایوان میں رکھنا چاہئے"۔
      انہوں نے کہا کہ یہ بل لوک سبھا سے بغیر کسی تبدیلی کے منظور ہو گیا ہے ، لیکن کانگریس سمیت کچھ اپوزیشن پارٹیوں نے راجیہ سبھا میں اس کی مخالفت کی ہے۔

      بتادیں کہ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ اس بل کو سلیکٹ کمیٹی کے پاس بھیجنے سے کوئی فائدہ نہیں ہوگا۔ اس پر پارلیمنٹ میں بحث ہونی چاہئے، تاکہ پورا ملک دیکھ سکے۔
      قابل ذکر ہے کہ متعلقہ بل میں طلاق بدعت کو قابل سزا جرم بنایا گیا ہے اور اس میں شوہر کو قید اور جرمانے کی تجویز ہے۔
      First published: