உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    تشار گاندھی سندیپ کا موازنہ مہاتما گاندھی سے کئے جانے پر برہم، کہا، یہ آشوتوش کا اخلاقی زوال ہے

    عام آدمی پارٹی کے سابق وزیر سندیپ کمار کے سیکس سی ڈی سانحہ میں عام آدمی پارٹی کے لیڈر آشوتوش کے ذریعہ مہاتما گاندھی سے اس معاملے کا موازنہ  کئے جانے والے بیان کی سخت مخالفت ہو رہی ہے۔

    عام آدمی پارٹی کے سابق وزیر سندیپ کمار کے سیکس سی ڈی سانحہ میں عام آدمی پارٹی کے لیڈر آشوتوش کے ذریعہ مہاتما گاندھی سے اس معاملے کا موازنہ کئے جانے والے بیان کی سخت مخالفت ہو رہی ہے۔

    عام آدمی پارٹی کے سابق وزیر سندیپ کمار کے سیکس سی ڈی سانحہ میں عام آدمی پارٹی کے لیڈر آشوتوش کے ذریعہ مہاتما گاندھی سے اس معاملے کا موازنہ کئے جانے والے بیان کی سخت مخالفت ہو رہی ہے۔

    • IBN Khabar
    • Last Updated :
    • Share this:

      نئی دہلی۔ عام آدمی پارٹی کے سابق وزیر سندیپ کمار کے سیکس سی ڈی سانحہ میں عام آدمی پارٹی کے لیڈر آشوتوش کے ذریعہ مہاتما گاندھی سے اس معاملے کا موازنہ  کئے جانے والے بیان کی سخت مخالفت ہو رہی ہے۔ گاندھی جی کے پرپوتےتشار گاندھی نے اسے آشوتوش کے اخلاقی زوال سے تعبیر کیا ہے۔


      تشار گاندھی نے کہا کہ مجھے افسوس ہے کہ آشوتوش نے ایسا کہا۔ ان جیسے معروف آدمی کا ایسی بات کرنا زیب نہیں دیتا۔ اپنے وزیر کا دفاع کرنے کے لئے باپو کو شامل کرنا مناسب نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ آشوتوش کو حق ہے اپنے وزیر کو بچانے کا۔ لیکن یہ آشوتوش کا اخلاقی زوال ہے۔ اس نے ثابت کر دیا کہ وہ کس درجہ کا شخص ہے۔


      بتا دیں کہ آشوتوش نے اپنے بلاگ میں سندیپ کا موازنہ  نہرو، گاندھی، اٹل بہاری واجپئی اور جارج فرنانڈیز کے رشتوں سے کر ڈالا ہے۔ جبکہ کیجریوال نے اپنے بیان میں سندیپ کمار کو گندی مچھلی تک بتاتے ہوئے ان کی اس حرکت کو شرمناک قرار دیا تھا۔

      First published: