ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

جموں و کشمیر : مسلح تصادم میں لشکر طیبہ کا دو دہشت گرد ہلاک ، سیکورٹی فورسیز کا سرچ آپریشن جاری

جنوبی کشمیر کے باند ی پورہ ضلع میں سکیورٹی دستوں اور دہشت گردوں کے درمیان آج صبح ہو نے والی شدید جھڑپ میں لشکر طیبہ کے دو شدت پسند مارے گئے

  • UNI
  • Last Updated: Oct 29, 2017 12:35 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
جموں و کشمیر : مسلح تصادم میں لشکر طیبہ کا دو دہشت گرد ہلاک ، سیکورٹی فورسیز کا سرچ آپریشن جاری
فائل فوٹو

سرینگر: جنوبی کشمیر کے باند ی پورہ ضلع میں سکیورٹی دستوں اور دہشت گردوں کے درمیان آج صبح ہو نے والی شدید جھڑپ میں لشکر طیبہ کے دو شدت پسند مارے گئے جبکہ فوج کاایک جوان زخمی ہو گیا۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ باندی پورہ ضلع میں حاجن علاقے کے میر محلہ میں دہشت گردوں کے چھپے ہونے کی خفیہ اطلاع کی بنیاد پر سکیورٹی دستوں اور جموں و کشمیر پولیس کے خصوصی مہم گروپ (ایس اوجی) نے ایک مشترکہ تلاشی مہم شروع کی۔


سیکورٹی فورسز جب میر محلہ میں ایک مخصوص علاقے کی طرف بڑھ رہے تھے کہ تب ہی پہلے سے چھپے شدت پسندوں نے ان پر خود کار ہتھیاروں سے اندھا دھند فائرنگ شروع کر دی۔سکیورٹی فورسز کے جوانوں نے جوابی حملہ کرتے ہوئے دو شدت پسندوں کو مار گرایا۔ ذرائع کے مطابق تصادم میں مارے گئے شدت پسندوں کا تعلق لشکر طیبہ سے ہے۔ اس تصادم میں پولیس کا ایک جوان بھی زخمی ہوا ہے۔


تازہ اطلاعات ملنے تک فائرنگ رک چکی ہے لیکن سکیورٹی فورسز کا سرچ آپریشن جاری ہے۔ علاقے میں نظم و نسق کو برقرار رکھنے کے لئے اضافی سکیورٹی فورسز کوتعینات کیا گیا ہے۔

First published: Oct 29, 2017 12:35 PM IST