ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

دہلی تشدد کے دوران رپورٹنگ کو لے کر دو نیوز چینلوں پر عائد پابندی ہٹا لی گئی

اطلاعات و نشریات کی وزارت نے ملیالم نیوز چینلز ’ایشیانیٹ نیوز‘ اور ’ميڈياون‘ کو شمال مشرقی دہلی میں تشدد کو غلط طریقے سے ٹیلی کاسٹ کرنے کے لئے جمعہ کو اگلے 48 گھنٹے تک ان کی نشریاتپر روک لگائی تھی۔

  • UNI
  • Last Updated: Mar 07, 2020 12:55 PM IST
  • Share this:
دہلی تشدد کے دوران رپورٹنگ کو لے کر دو نیوز چینلوں پر عائد پابندی ہٹا لی گئی
تشدد زدہ شیووہار علاقے میں 2 مارچ کو مقامی لوگ امن مارچ نکالتے ہوئے۔

نئی دہلی۔ مرکزی حکومت نے ہفتہ کو مليالی زبان کے دو نیوز چینلز- ’ایشیانیٹ نیوز‘ اور ’ميڈياون ‘کی نشریات پر جمعہ کو عائد پابندی ہٹا لی ہے۔ ذرائع نے بتایا کہ ملک بھر میں سماجی ہم آہنگی کو خراب کرنے کے سبب دونوں نیوز چینلز کی نشریات پر جمعہ کو 48 گھنٹے کی پابندی لگائی گئی تھی، جسے آج صبح ہٹا لی گئی۔



اطلاعات و نشریات کی وزارت نے ملیالم نیوز چینلز ’ایشیانیٹ نیوز‘ اور ’ميڈياون‘ کو شمال مشرقی دہلی میں تشدد کو غلط طریقے سے ٹیلی کاسٹ کرنے کے لئے جمعہ کو اگلے 48 گھنٹے تک ان کی نشریاتپر روک لگائی تھی۔ وزارت نے جمعہ کو جاری اپنے حکم میں کہا کہ ٹیلی ویژن کی نشریات کے سلسلہ میں جاری ہدایات کی خلاف ورزی کر کے یہ خبریں دکھائی گئی تھیں۔ اس میں ایک خاص فرقہ کے مذہبی مقام پر حملہ کی بات کہی گئی جس سے سماج میں بدامنی پھیل سکتی تھی۔

وزارت نے جمعہ کو ساڑھے سات بجے سے لے کر اتوار کی شام ساڑھے سات بجے تک 48 گھنٹوں کے لئے’ میڈیاون‘ اور ’ایشیانیٹ نیوز‘ کی نشریات پر روک لگانے کا حکم دیا تھا۔ کانگریس نے دونوں چینلوں پر پابندی لگانے پر حکومت کی تنقید کی تھی اور کہا کہ یہ میڈیا کی آزادی کے خلاف ہے۔
First published: Mar 07, 2020 12:54 PM IST