ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

ایکسس بینک کے دو منیجر گرفتار، کالا دھن کر رہے تھے سفید، بینک نے ملزمین کو کیا برطرف

انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ نے پرانے نوٹ تبدیل کرنے میں مبینہ بے ضابطگیوں اور نئے نوٹوں کی فراہمی کر کالا دھن جمع کرنے کے الزامات کے مدنظر منی لانڈرنگ کی اپنی انکوائری کے سلسلے میں نجی بینک ایکسس بینک کے دو افسران کو گرفتار کیا ہے۔

  • News18.com
  • Last Updated: Dec 05, 2016 12:27 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
ایکسس بینک کے دو منیجر گرفتار، کالا دھن کر رہے تھے سفید، بینک نے ملزمین کو کیا برطرف
انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ نے پرانے نوٹ تبدیل کرنے میں مبینہ بے ضابطگیوں اور نئے نوٹوں کی فراہمی کر کالا دھن جمع کرنے کے الزامات کے مدنظر منی لانڈرنگ کی اپنی انکوائری کے سلسلے میں نجی بینک ایکسس بینک کے دو افسران کو گرفتار کیا ہے۔

نئی دہلی۔ انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ نے پرانے نوٹ تبدیل کرنے میں مبینہ بے ضابطگیوں اور نئے نوٹوں کی فراہمی کر کالا دھن جمع کرنے کے الزامات کے مدنظر منی لانڈرنگ کی اپنی انکوائری کے سلسلے میں نجی بینک ایکسس بینک کے دو افسران کو گرفتار کیا ہے۔ حکام نے گرفتار افراد کی شناخت شوبھت سنہا اور ونیت سنہا کے طور پر کی ہے جو یہاں واقع ایکسس بینک کی کشمیری گیٹ شاخ میں مینیجر ہیں۔


حکام کے مطابق، دونوں کو کل شام منی لانڈرنگ انسداد قانون (پی ایم ایل اے) کی دفعات کے تحت گرفتار کیا گیا۔ دونوں کو حراست کے لئے آج عدالت میں پیش کیا جائے گا۔ ساتھ ہی حکام نے بتایا کہ ایجنسی نے لکھنؤ میں ایک جگہ سے مبینہ رشوت کی ادائیگی کے طور پر بینکاروں کو دی گئی سونے کی ایک چھڑ ضبط کی ہے۔


ایکسس بینک نے اس سلسلے میں ایک بیان جاری کر کہا ہے کہ یہ بینک کارپوریٹ گورننس کے اعلی ترین معیارات پر عمل کرنے کے تئیں پابند عہد ہے اور مثالی ضابطہ اخلاق سے اپنے ملازمین کی کسی بھی کوتاہی کو قطعی برداشت نہیں کرتا۔ اس خاص معاملے میں بینک نے مبینہ ملزم ملازموں کو برطرف کر دیا اور تحقیقاتی ایجنسیوں کے ساتھ تعاون کیا جا رہا ہے۔


واضح رہے کہ آٹھ نومبر کو وزیر اعظم نریندر مودی نے اعلان کیا تھا کہ 500 اور 1000 روپے کے نوٹ کی اب کوئی قانونی حیثیت نہیں رہے گی۔ پی ایم مودی کے اس قدم کے بعد سے ہی کالا دھن رکھنے والوں میں ہنگامہ مچا ہوا ہے۔
First published: Dec 05, 2016 12:26 PM IST