ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

ہوائی چپل سے ہوائی جہاز : وزیر اعظم مودی کے ڈریم پروجیکٹ کی کچھوا چال !۔

وزیر اعظم نریندر مودی نے عام شہریوں کو سستا ہوائی سفر کرانے کی اسکیم اڑان شروع کی تھی ، حالانکہ اس اسکیم میں تاخیر ہورہی ہے۔

  • Share this:
ہوائی چپل سے ہوائی جہاز : وزیر اعظم مودی کے ڈریم پروجیکٹ کی کچھوا چال !۔
گزشتہ سال 27 اپریل کو شملہ - دہلی روٹ کا افتتاح کرتے ہوئے وزیر اعظم مودی ۔ پی ٹی آئی فائل فوٹو۔

وزیر اعظم نریندر مودی نے عام شہریوں کو سستا ہوائی سفر کرانے کی اسکیم اڑان شروع کی تھی ، حالانکہ اس اسکیم میں تاخیر ہورہی ہے۔ دراصل چھوٹے شہروں تک ہوائی سفر شروع کرنے کیلئے ضروری ہوائی اڈوں کو شروع کرنے کا کام رفتار نہیں پکڑ پارہا ہے۔ مرکز کی مودی حکومت کی خواہش ہے کہ ہوائی چپل پہننے والے عام لوگ بھی ہوائی سفر کرسکیں۔

وزیر اعظم مودی نے 2017 میں اس پروگرام کی شروعات کی تھی۔ 27 اپریل 2017 کو اڑان کے تحت پہلی پرواز الائنس ایئر کے ذریعہ شملہ - دہلی روٹ پر شروع کی گئی تھی ۔ اڑان اسکیم کے تحت حکومت نے یہ طے کیا تھا کہ سال 2017 کے آخر تک 31 نئے ہوائی اڈے کھولے جائیں ، لیکن اب تک صرف 16 ہی آپریشنل ہوسکے ہیں۔ افسران میں سے ایک نے کہا کہ کئی ریاستوں نے کہا ہے کہ ان کے پاس ضروری فائر انجن کیلئے پیسہ نہیں ہے۔

ان سب کے درمیان اسکیم میں ہورہی تاخیر کے پیش نظر مرکزی حکومت نے فیصلہ کیا ہے کہ وہ خود زیادہ تر آلات کی خریداری کرے گی ۔ وسط جون تک باقی بچے 15 ہوائی اڈوں کو شروع کرنے کیلئے مرکزی حکومت کی جانب سے سامان ریاستوں کو لیز پر دیا جائے گا۔

خیال رہے کہ اس اسکیم میں تاخیر سے وزیر اعظم مودی کیلئے روکاوٹ پیدا ہوسکتی ہے ، جنہوں نے ترقیاتی اصلاحات کی بات کہی ہے۔ وہ چاہتے ہیں کہ سال 2019 کے الیکشن میں ان کی یہ شبیہ برقرار رہے۔ حالیہ سالوں میں ہندوستان میں ہوائی سفر کے مسافروں میں سالانہ تقریبا 20 فیصد کا اضافہ ہوا ہے۔

سرکار کی جانب سے دی گئی معلومات کے مطابق فلائٹ سروسز کیلئے منتخب ایئرلائن آپریٹر کو کم سے کم 9 اور زیادہ سے زیادہ 40 سیٹیں سبسڈی کی قیمت پر دینی ہوں گی اور ہیلی کاپٹر کیلئے کم سے کم پانچ اور زیادہ سے زیادہ 13 سیٹیں سبسڈائزڈ شرح پر دینی ہوں گی ۔ ( ایجنسی ان پٹ کے ساتھ)۔

First published: Jun 11, 2018 11:29 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading