ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

میرٹھ : رمضان میں معمولات زندگی اور عبادات کے لئے کیا ہیں علماء کی ہدایات

شہر قاضی میرٹھ نے ایک مرتبہ پھر لوگوں سے نماز کو گھروں میں قائم کرنے اور تراویح کا گھر پر ہی اہتمام کرنے کی اپیل کی ہے۔

  • Share this:
میرٹھ : رمضان میں معمولات زندگی اور عبادات کے لئے کیا ہیں علماء کی ہدایات
شہر قاضی میرٹھ نے ایک مرتبہ پھر لوگوں سے نماز کو گھروں میں قائم کرنے اور تراویح کا گھر پر ہی اہتمام کرنے کی اپیل کی ہے۔

میرٹھ ۔ ملک میں لاک ڈاؤن کے سبب ماہ رمضان میں معمولات کے مطابق اس مرتبہ نہ تو سحری اور افطاری کی اشیاء کی خریداری کے لئے بازار ہی سج سکیں گے اور نہ ہی ماہ رمضان کی معمولات کے مطابق مساجد میں نماز اور تراویح ہی ادا کی جا سکے گی۔ اب ایسے حالات میں ماہ رمضان کے دوران روزے کے اہتمام کے ساتھ سحری، افطاری اور تراویح کے اہتمام کے لئے علماء کرام نے ہدایات جاری کی ہیں۔


شہر قاضی میرٹھ پروفیسر قاضی زین الساجدین نے لوگوں سے اپیل کی ہے کہ جس طرح سے لاک ڈاؤن کے نفاذ کے بعد سے مساجد میں جماعت سے نماز پر پابندی ہے اور احتیاطی تدابیر پر سختی سے عمل کرتے ہوئے تمام اصول و ضوابط کی پاسداری رکھنے کی کوشش کی جا رہی ہیں۔ اسی طرح ماہ رمضان کے دوران بھی احتیاط برتنا ضروری ہے۔ شہر قاضی نے ایک مرتبہ پھر لوگوں سے نماز کو گھروں میں قائم کرنے اور تراویح کا گھر پر ہی اہتمام کرنے کی اپیل کی ہے۔ وہیں صدر جمعیت علماء ہند شہر میرٹھ قاضی زین الراشدین نے بھی ماہ رمضان کے دوران لوگوں سے خاص احتیاط برتنے کی اپیل کی ہے اور ساتھ ہی ضلع انتظامیہ سے بھی مطالبہ کیا ہے کہ ماہ رمضان میں روزے داروں کے لیے سحری اور افطاری کی اشیاء ضروریہ کا خیال رکھتے ہوئے خریداری کے لئے شرائط اور احتیاط کے ساتھ کچھ رعایت دی جانی چاہئے۔




جمیعت علماء کے ذمہ داران نے ضلع انتظامیہ سے گزارش کی ہے کہ ایسی سماجی اور ملی تنظیموں کو اجازت دی جانی چاہیے جو ضرورتمند افراد کے لیے رمضان کٹ تقسیم کرنے کا انتظام کر رہے ہیں۔ نائب شہر قاضی کے مطابق ان حالات میں سماج کا غریب اور مزدور طبقہ مفلوج ہو کر رہ گیا ہے اور ایسے میں اس طبقے کو مدد کی سب سے زیادہ ضرورت ہے۔
First published: Apr 24, 2020 02:40 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading