உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    یو این ایس سی کاؤنٹر ٹیررازم کمیٹی کی ہندوستان میں خصوصی میٹنگ، نتائج کے ضمن میں دسمبر میں بریفنگ کا ارادہ

    ہندوستان اگلے ماہ اقوام متحدہ کی 15 ملکی سلامتی کونسل کی گھومتی ہوئی صدارت سنبھالیں گے

    ہندوستان اگلے ماہ اقوام متحدہ کی 15 ملکی سلامتی کونسل کی گھومتی ہوئی صدارت سنبھالیں گے

    کمبوج نے کہا کہ خصوصی میٹنگ کے نتیجے کے طور پر کمیٹی نے دہشت گردی کے مقاصد کے لیے نئی اور ابھرتی ہوئی ٹیکنالوجیز کے استعمال کے خلاف ’دہلی اعلامیہ‘ (Delhi Declaration) کو اپنایا۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Mumbai | Delhi | Hyderabad | Lucknow | Karnataka
    • Share this:
      یو این ایس سی کاؤنٹر ٹیررازم کمیٹی کی چیئر اور اقوام متحدہ میں ہندوستان کی مستقل نمائندہ روچیرا کمبوج نے بدھ کو کہا کہ اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل (UNSC) کی انسداد دہشت گردی کمیٹی اکتوبر میں ہندوستان میں ہونے والی اپنی خصوصی میٹنگ کے نتائج پر اگلے ماہ ایک بریفنگ کا اہتمام کرنے کا منصوبہ بنا رہی ہے، جس میں اس کی کامیابیوں کو اجاگر کیا جائے گا۔

      کمبوج نے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کو 1373 انسداد دہشت گردی کمیٹی کی سربراہ کی حیثیت سے بریفنگ دیتے ہوئے یاد دلایا کہ کمیٹی نے ’دہشت گردانہ مقاصد کے لیے نئی اور ابھرتی ہوئی ٹیکنالوجیز کے استعمال کا مقابلہ‘ کے اہم موضوع پر ایک خصوصی اجلاس منعقد کیا تھا۔ جو کہ ممبئی اور نئی دہلی میں 28 اور 29 اکتوبر کو حکومت ہند کے فراخدلانہ تعاون سے منعقد ہوا تھا۔

      خصوصی اجلاس میں ہونے والی بات چیت میں اہم ٹیکنالوجیز جیسے انٹرنیٹ، سوشل میڈیا، بغیر پائلٹ کے فضائی نظام (UAS) اور ڈرون پر خصوصی توجہ دی گئی۔ اس دوران دہشت گردی کے مقاصد کے لیے استعمال سے پیدا ہونے والے بڑھتے خطرے پر توجہ مرکوز تھی۔ کمیٹی کے ارکان نے ہندوستان میں 26/11 کے ممبئی دہشت گردانہ حملوں کے متاثرین سمیت دہشت گردی کے تمام متاثرین کو بھی خراج عقیدت پیش کیا۔

      یہ بھی پڑھیں: 

      کمبوج نے کہا کہ خصوصی میٹنگ کے نتیجے کے طور پر کمیٹی نے دہشت گردی کے مقاصد کے لیے نئی اور ابھرتی ہوئی ٹیکنالوجیز کے استعمال کے خلاف ’دہلی اعلامیہ‘ (Delhi Declaration) کو اپنایا۔
      انہوں نے کہا کہ یہ اعلان ایک اہم دستاویز ہے جس کا مقصد جامع اور موثر انداز میں اس خطرے سے نمٹنے کے لیے کونسل کے نقطہ نظر کو اپنانا ہے۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: