உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    بجنور کے سعد میاں نے بہت کم عمر میں سول سروس امتحان میں 25 ویں رینک پاکر ملک کا نام کیا روشن

    سعد میاں خان اور ان کے والدین

    سعد میاں خان اور ان کے والدین

    اگر ایک انسان کو کچھ کر گزرنے کا جذبہ ہو تو بڑے سے کا م بھی آسان ہو جاتے ہیں۔ایس اہی کچھ کر دکھایا بجنور کے سعاد میاں نے بہت کم عمر میں سول سروس امتحان میں انڈیا میں 25 ویں رینک پاکر اب آئی پی ایس بن کر ملک کی خدمت کریں گے۔

    • Share this:
      اگر ایک انسان کو کچھ کر گزرنے کا جذبہ ہو تو بڑے سے کا م بھی آسان ہو جاتے ہیں۔ایس اہی کچھ کر دکھایا بجنور کے سعاد میاں نے بہت کم عمر میں سول سروس امتحان میں انڈیا  میں 25 ویں رینک پاکر اب آئی پی ایس بن کر ملک کی خدمت کریں گے۔وہیں اتنی بڑی  کے کامیابی  کے بعد گھر والوں میں  خوشی کا ماحول ہے تو وہیں مبارکباد پیش کرنے کیلئے لوگوں کی گھرپر آنا جانا جاری ہے۔،

      بتادیں کہ  بجنور کے رہنے والےسعد میاں خان جن کا گزری شام یوپی ایس سی 2017 کا امتحان میں آل اوور انڈیا میں 25 یں رنک آئی ہے۔جس کے مطابق سعاد کو آئی پی ایس ریمک ملنا طے ہے۔

      واضح ہو کہ سعد نے 2007 میں انٹر تک کی پڑھائی سینٹ میری اسکول بجنور سے ہی کی ہے۔اس کے بعد 2012 میں کانپور کے ہر کورٹ بٹلر ٹیکنا لوجی انسٹی ٹیوٹ سے بی ٹیک سول انجینئرنگ کی ۔سعاد نے گھر پر رہ کر سول سروس سیوا کی تیاری کی ۔پانچویں بار میں سعد میاں خان نے 25 ویں رینک حاصل کر کے نہ صرف بجنور کا نام روشن کیا بلکہ ملک کا نام روشن کیا۔

      سعاد کے اہل خانہ میں والدین کے علوہ دو بھائی اور دو بہنیں ہیں۔سعاد کے والد رئیس احمد سابق انتخابی افسر کے عہدے سے ریٹائر ہیں۔بیٹے کی کامیابی کے بعد والدین بیحد خوش ہیں اور پورے کنبے میں کوشی کا ماحول ہے۔ان کا کہنا ہے کہ محنت اور لگن سے کامیابی قدم ضرور چومتی ہے ۔رات بھر پڑھائی اور بھوکے رہ کر سعاد نے پڑھائی کر کے محنت کی۔بہر حال کامیابی کے بعد کامیابی کے بعد سے ہی شام سے گھر پر مبارکباد بعد کا سلسلہ جاری ہے۔
      First published: