உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    بلند شہرتشدد: انسپکٹرسبودھ سنگھ کے قاتلوں کو بچارہی ہے یوگی حکومت: کانگریس کا بڑا الزام

    سینئر کانگریس لیڈر اور یوپی کانگریس کمیٹی کے صدر راج ببر: فائل فوٹو۔

    سینئر کانگریس لیڈر اور یوپی کانگریس کمیٹی کے صدر راج ببر: فائل فوٹو۔

    راج ببرنے کہا کہ ملک میں ایسے کئی معاملے سامنے آئے ہیں، جن میں بھارتیہ جنتا پارٹی کے لیڈروں اوران کےغنڈوں نے پولیس افسران اورعام لوگوں کوڈرایا-دھمکایا ہے، انہیں بے عزت کیا اوران پر حملہ کیا ہے۔

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:
      نئی دہلی: کانگریس نے اترپردیش کی یوگی حکومت پربلندشہرمیں گورکشکوں کے تشدد میں مارےگئے انسپکٹرسبودھ کمارسنگھ کے قاتلوں کوبچانے کا الزام لگاتے ہوئے اس معاملے میں آج عدالتی جانچ کرانے کا مطالبہ کیا۔ کانگریس کے اترپردیش انچارج راج ببرنے یہاں نامہ نگاروں سے کہا کہ 2014 میں مودی حکومت کے اقتدار میں آنے کے بعد سے یہ واحد معاملہ نہیں ہے۔

      راج ببرنے کہا کہ ملک میں ایسے کئی معاملے سامنے آئے ہیں، جن میں بھارتیہ جنتا پارٹی کے لیڈروں اوران کےغنڈوں نے پولیس افسران اورعام لوگوں کوڈرایا-دھمکایا ہے، انہیں بے عزت کیا اوران پر حملہ کیا ہے۔ انہوں نے کہا "بلندشہرکا واقعہ 3 دسمبرکوہواتھا۔ اس واقعہ کے25 دن بعد بھی پولیس کے پاس سبودھ کمار سنگھ کے قاتلوں کا کوئی سراغ نہیں ہے۔ وزیراعلی یوگی آدتیہ ناتھ اور بی جےپی کے دیگر لیڈر وقت -وقت پرسازش کی بات کررہے ہیں۔ وہ قاتلوں کو پکڑنے کے لئےکچھ بھی نہیں کررہےاورالٹا مجرموں کو بچا رہے ہیں"۔

      کانگریس لیڈرنےکہا کہ کانگریس اب تک کی جانچ سے مطمئن نہیں ہے۔ صرف سپریم کورٹ کے جج یا الہ آباد ہائی کورٹ کے چیف جسٹس کی صدارت میں عدالتی جانچ سے ہی سچ سامنے آسکتا ہے۔ انہوں نے الزام لگایا کہ اترپردیش کے ساتھ ملک کے دوسرے علاقوں میں بھی موبلٹی بڑھ رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ پورے ملک میں تشدد اورقتل کے کئی واقعات ہوئےہیں، لیکن کسی بھی معاملے میں کوئی کارروائی نہیں کی گئی ہے۔
      راج ببر نے کہا کہ اترپردیش کے وزیراعلی نے مقتول انسپکٹرکےگھر جانے کی بھی زحمت نہیں کی۔ اس کے برعکس انہوں نےان کے خاندان کوہی اپنی رہائش گاہ پر بلوایا۔ انہوں نے کہا ’’ریاست میں افراتفری کا ماحول ہے. حکومت کے رویہ کی وجہ سے عام لوگوں کی زندگی مشکل میں ہے۔ 2014 کے لوک سبھا انتخابات میں لوگوں نے بی جےپی کو 71 سیٹیں دی تھیں، لیکن حکومت نے لوگوں کوکچھ نہیں دیا"۔ انہوں نے الزام لگایا کہ ریاست میں خواتین اوردیگرشہریوں کی زندگی خطرے میں ہے اوراس لئے یوگی حکومت کواقتدارمیں بنے رہنے کا کوئی حق نہیں ہے۔
      First published: