உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    مجرموں کے دل میں بیٹھا سی ایم یوگی کا خوف! بلڈوزر دیکھتے ہی Gangrape کے ملزموں نے کر دیا سرینڈر

     سہارنپور ضلع میں اجتماعی عصمت دری کے ملزم (Gangrape accuse) دو بھائیوں نے گھر پر بلڈوزر پہنچنے کے برف خود کو تھانے میں سرینڈر کر دیا۔ موصولہ اطلاعات کے مطابق سہارنپور ضلع کے چکلانہ تھانہ علاقے میں رہنے والے دو بھائیوں عامر اور آصف پر شادی کے بہانے نابالغ لڑکی کی اجتماعی آبرو ریزی کا الزام ہے۔

    سہارنپور ضلع میں اجتماعی عصمت دری کے ملزم (Gangrape accuse) دو بھائیوں نے گھر پر بلڈوزر پہنچنے کے برف خود کو تھانے میں سرینڈر کر دیا۔ موصولہ اطلاعات کے مطابق سہارنپور ضلع کے چکلانہ تھانہ علاقے میں رہنے والے دو بھائیوں عامر اور آصف پر شادی کے بہانے نابالغ لڑکی کی اجتماعی آبرو ریزی کا الزام ہے۔

    سہارنپور ضلع میں اجتماعی عصمت دری کے ملزم (Gangrape accuse) دو بھائیوں نے گھر پر بلڈوزر پہنچنے کے برف خود کو تھانے میں سرینڈر کر دیا۔ موصولہ اطلاعات کے مطابق سہارنپور ضلع کے چکلانہ تھانہ علاقے میں رہنے والے دو بھائیوں عامر اور آصف پر شادی کے بہانے نابالغ لڑکی کی اجتماعی آبرو ریزی کا الزام ہے۔

    • Share this:
      سہارنپور۔ اتر پردیش میں یوگی آدتیہ ناتھ حکومت (Yogi Sarkar 2.0)   کے دوسرے دور حکومت میں مجرموں کے سروں پر بلڈوزر (Bulldozer) کا خوف گھوم رہا ہے۔ ریاست کے کئی اضلاع میں اس کی پہچان دیکھنے کو مل رہی ہے۔ اس سے قبل پرتاپ گڑھ میں خاتون کی عصمت دری کرنے والے ملزم نے اپنے گھر کے سامنے بلڈوزر کھڑا کرنے کے بعد پولیس کے سامنے خودسپردگی کردی تھی۔ وہیں اب سہارنپور ضلع میں اجتماعی عصمت دری کے ملزم (Gangrape accuse) دو بھائیوں نے گھر پر بلڈوزر پہنچنے کے برف خود کو تھانے میں سرینڈر کر دیا۔

      موصولہ اطلاعات کے مطابق سہارنپور ضلع کے چکلانہ تھانہ علاقے میں رہنے والے دو بھائیوں عامر اور آصف پر شادی کے بہانے نابالغ لڑکی کی اجتماعی آبرو ریزی کا الزام ہے۔ لڑکی کی ماں نے 25 مارچ کو دونوں کے خلاف ایف آئی آر درج کرائی تھی۔ ساتھ ہی ان کے 56 سالہ والد شرافت پر ڈرانے دھمکانے کا الزام بھی لگایا تھا

      ملزم کا خاندان رسوخ دار ہے اور ان کا تعلق گاؤں کے سربراہ کے خاندان سے ہے۔ پولیس میں ان کے خلاف عصمت دری کا مقدمہ درج ہونے کے بعد یہ لوگ فرار ہوگئے تھے۔ ایسے میں پولیس نے ان کی گرفتاری کے لیے ان کے گھر کے باہر بلڈوزر کھڑا کر دیا۔ اس دوران پولیس نے خبردار کیا کہ اگر اس نے 48 گھنٹے کے اندر ہتھیار نہیں ڈالے تو اس کے گھر کو بلڈوزر سے مسمار کر دیا جائے گا۔۔

      اس واقعے کی ایک ویڈیو بھی سوشل میڈیا پر وائرل ہو رہی ہے، جس میں بلڈوزر سے گھر کی تین سیڑھیاں توڑی جا رہی ہیں۔ اس کے ساتھ وہاں کھڑی پولیس اہل خانہ اور رشتہ داروں کو وارننگ دے رہی ہے۔ پولیس کی اس کارروائی کا اثر یہ ہوا کہ اگلے ہی دن دونوں ملزمان نے تھانے آکر خود کو سپرد کردیا۔

      شاہ رخ خان کی کیCricket Team کو چیئر کرنے اسٹیڈیم پہنچیں بیٹی سہانا خان، سامنے آئی تصویر

      Published by:Sana Naeem
      First published: