உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    انادرمک کے ہنگامے کی وجہ سے لوک سبھا میں نہیں ہو سکا وقفہ سوالات

    فائل فوٹو

    فائل فوٹو

    نئی دہلی۔ کاویری واٹر مینجمنٹ بورڈ قائم کرنے کے مطالبہ پر انادرمک کے ارکان کے ہنگامے کی وجہ سے آج لوک سبھا میں 18 ویں دن بھی وقفہ سوالات نہیں ہو سکا اور کارروائی دوپہر 12 بجے تک ملتوی کر دی گئی۔

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:

      نئی دہلی۔ کاویری واٹر مینجمنٹ بورڈ قائم کرنے کے مطالبہ پر انادرمک کے ارکان کے ہنگامے کی وجہ سے آج لوک سبھا میں 18 ویں دن بھی وقفہ سوالات نہیں ہو سکا اور کارروائی دوپہر 12 بجے تک ملتوی کر دی گئی۔ انادرمک کے ارکان کے ہنگامے کی وجہ سے پانچ منٹ کے اندر ہی کارروائی دوپہر 12 بجے تک ملتوی کرنی پڑی۔ صبح ایوان کی کارروائی شروع ہوتے ہی انادرمک کے رکن اسپیکر کی چیئر کے قریب پہنچ کر ’ہمیں انصاف چاہیے‘ کے نعرے لگانے لگے۔ انہوں نے اپنے مطالبات والے پلےكارڈ بھی ہاتھوں میں لے رکھے تھے اور سیاہ، سفید اور سرخ رنگ کے ترنگے پٹکے بھی لگا رکھے تھے۔

      اس دوران زرد پٹکا لگائے ٹی ڈی پی ارکان سمیت تمام اراکین پرسکون انداز میں اپنی اپنی نشستوں پر بیٹھے رہے۔ کانگریس کے كانتی لال بھوریا اور راشٹریہ جنتا دل کے جے پرکاش نارائن یادو نے درج فہرست ذات و قبائل کے لوگوں پر ظلم و زیادتی کے الزام لگائے۔ اسپیکر سمترا مہاجن نے انادرمک کے ارکان سے اپنی اپنی نشستوں پر جا کر بیٹھنے کو کہا اور امن و امان برقرار رکھنے کی اپیل کی، لیکن نعرے بازی کر رہے انادرمک کے ارکان پر ان کی اپیل کا کوئی اثر نہیں ہوا۔ اس کے بعد انہوں نے 11 بجکر تین منٹ پر ایوان کی کارروائی دوپہر 12 بجے تک ملتوی کر دی۔

      پانچ مارچ سے بجٹ سیشن کا دوسرا مرحلہ شروع ہونے کے بعد سے ہی الگ الگ ایشوزکو لے کر اپوزیشن کے ہنگامے کی وجہ سے ایوان کی کارروائی میں رکاوٹ پیدا ہو رہی ہے، اور وقفہ سوالات نہیں ہو پا رہا ہے۔ بجٹ سیشن کا موجودہ اجلاس چھ اپریل تک چلنا ہے۔

      First published: