உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    پارلیمنٹ کے دونوں ایوانوں میں جھگیاں توڑے جانے اور پنجاب میں قانون وانتظام کے معاملہ پر ہنگامہ آرائی

    نئی دہلی۔ پارلیمنٹ کے دونوں ایوانوں میں آج بھی جم کر ہنگامہ ہوا۔

    نئی دہلی۔ پارلیمنٹ کے دونوں ایوانوں میں آج بھی جم کر ہنگامہ ہوا۔

    نئی دہلی۔ پارلیمنٹ کے دونوں ایوانوں میں آج بھی جم کر ہنگامہ ہوا۔

    • IBN7
    • Last Updated :
    • Share this:
      نئی دہلی۔ پارلیمنٹ کے دونوں ایوانوں میں آج بھی جم کر ہنگامہ ہوا۔ دونوں ایوانوں میں کانگریس ممبران پارلیمنٹ نے پنجاب میں قانون وانتظام کا مسئلہ اٹھاتے ہوئے ریاستی حکومت کو برخاست کرنے کا مطالبہ کیا۔ راجیہ سبھا میں وزیر خارجہ سشما سوراج کے پاکستان دورے پر تقریر کے دوران اپوزیشن رہنما ہنگامہ کرتے رہے۔ اسی ہنگامے کے درمیان سشما نے اپنی تقریرکو جاری رکھا۔

      کانگریسی رہنما ویل تک آکر حکومت کے خلاف نعرے بازی کرنے لگے۔ سشما تقریر پڑھتی رہیں اور اس دوران کانگریس ممبران پارلیمنٹ حکومت کے خلاف مسلسل 'وی وانٹ جسٹس' کے نعرے لگاتے رہے۔ ہنگامے کے درمیان سشما کی آواز تک صاف سنائی نہیں دے رہی تھی۔ راجیہ سبھا میں کانگریس ممبران پارلیمنٹ نے پنجاب میں قانون وانتظام کا مسئلہ اٹھاتے ہوئے ریاستی حکومت کو برخاست کرنے کا مطالبہ کیا۔

      اس پر پارلیمانی امور کے وزیر مملکت مختار عباس نقوی نے کہا کہ آپ کسی بھی ریاست کے معاملے کو لے کر ایوان میں خلل ڈالیں گے یہ ٹھیک نہیں۔ ہم چاہتے ہیں کہ پنجاب میں جو کچھ ہوا وہاں ریاستی حکومت مجرموں کے خلاف کارروائی کرے۔

      سشما نے پاک ۔ ہند مذاکرات پر بیان دیتے ہوئے کہا کہ پاکستان کے ساتھ ہم تمام مسائل پر بات چیت کے لئے تیار ہیں۔ نواز شریف کے ساتھ دہشت گردی کے معاملے پر بات چیت ہوئی۔ سشما نے کہا کہ مودی سارک کانفرنس میں حصہ لینے کے لئے 2016 میں پاکستان جائیں گے۔

      لوک سبھا میں بھی ایسا ہی نظارہ دیکھنے کو ملا۔ کانگریس سمیت حزب اختلاف کے ممبران نے دہلی کی شكور بستی میں جھگیاں اجاڑنے اور پنجاب میں قانون وانتظام کی صورت حال کا معاملہ اٹھایا۔ اسے لے کر جم کر ہنگامہ مچا رہا جس کے بعد ایوان کی کارروائی 11.30 بجے تک ملتوی کر دی گئی۔

       

       
      First published: