உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    پارلیمنٹ میں ہنگامہ ، کانگریس نے کہا : مالیا کے بھگانے کیلئے حکومت ذمہ دار

    نئی دہلی : وجے مالیا کے معاملے پر آج راجیہ سبھا میں جم کر ہنگامہ ہوا۔ کانگریس نے حکومت کو گھیرتے ہوئے کہا کہ مالیا کے بیرون ملک جانے کیلئے حکومت بھی ذمہ دار ہے۔ جواب میں حکومت نے کانگریس پر حملہ بولتے ہوئے اس کے لئے کانگریس کو ہی ذمہ دار ٹھہرایا۔

    نئی دہلی : وجے مالیا کے معاملے پر آج راجیہ سبھا میں جم کر ہنگامہ ہوا۔ کانگریس نے حکومت کو گھیرتے ہوئے کہا کہ مالیا کے بیرون ملک جانے کیلئے حکومت بھی ذمہ دار ہے۔ جواب میں حکومت نے کانگریس پر حملہ بولتے ہوئے اس کے لئے کانگریس کو ہی ذمہ دار ٹھہرایا۔

    نئی دہلی : وجے مالیا کے معاملے پر آج راجیہ سبھا میں جم کر ہنگامہ ہوا۔ کانگریس نے حکومت کو گھیرتے ہوئے کہا کہ مالیا کے بیرون ملک جانے کیلئے حکومت بھی ذمہ دار ہے۔ جواب میں حکومت نے کانگریس پر حملہ بولتے ہوئے اس کے لئے کانگریس کو ہی ذمہ دار ٹھہرایا۔

    • Agencies
    • Last Updated :
    • Share this:

      نئی دہلی : وجے مالیا کے معاملے پر آج راجیہ سبھا میں جم کر ہنگامہ ہوا۔ کانگریس نے حکومت کو گھیرتے ہوئے کہا کہ مالیا کے بیرون ملک جانے کیلئے حکومت بھی ذمہ دار ہے۔ جواب میں حکومت نے کانگریس پر حملہ بولتے ہوئے اس کے لئے کانگریس کو ہی ذمہ دار ٹھہرایا۔
      کانگریس لیڈر غلام نبی آزاد نے مسئلہ اٹھاتے ہوئے کہا کہ سی بی آئی نے مالیا کے خلاف 29 جولائی 2015 کو معاملہ درج کیا تھا، ہمیں لگا وہ پکڑ میں آ جائیں گے۔ سی بی آئی کا کہنا ہے کہ اس نے لك آؤٹ نوٹس جاری کیا ہے۔ جب اتنی ایجنسیاں اس کی جانچ کر رہی تھیں ، تو انہیں گرفتار کیوں نہیں کیا گیا۔ سب کو پتہ ہے کے وہ ایک ایسا پرندہ ہے ، جو آج اس ڈال پر کل اس ڈال پر رہتا ہے۔ اس کا پاسپورٹ ضبط کیوں نہیں کیاگیا ، وہ حکومت کی وجہ سے فرار ہوا ہے۔ اس مجرمانہ سازش میں حکومت ہند بھی شریک ہے۔ سپریم کورٹ اور حکومت ہند کو اس معاملے میں نوٹس لینا چاہئے۔
      جواب میں ارون جیٹلی نے کہا کہ جب وجے مالیا باہر تھے، تب کانگریس کی حکومت تھی اور فیما کے تحت مقدمہ درج کیا گیا تھا۔ مالیا کو پچھلی حکومت میں سہولتیں ملی تھیں۔ مالیا پر 9 ہزار کروڑ کا قرض ہے اور ان کی کئی جائیداد ضبط کی گئی ہیں ۔ بینک ایک ایک پیسہ وصول کرنے میں لگے ہیں۔
      ارون جیٹلی کے جواب کے بعد آزاد پھر کھڑے ہوئے اور کہا کہ جب کوئی غریب شخص 5 ہزار کا بھی لون لیتا ہے ، تو بینک اس سے سود وصول کرتاہے۔ حکومت کو بینکوں پر بھی کارروائی کرنی چاہئے۔ بینک ہمارا یا آپ کا نہیں ہے۔ وجے مالیا کی شکل میں دوسرا للت مودی پیدا نہیں ہونا چاہئے۔

      First published: