உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    اُرجت پٹیل بنے ریزرو بینک کے نئے گورنر ، جانئے کیا کیا ہیں اہم حصولیابیاں

    اقتصادی سیکٹر میں مختلف قومی اور بین الاقوامی اداروں میں اپنی صلاحیتوں کا لوہا منوا چکے ڈاکٹر اُرجت پٹیل ریزرو بینک آف انڈیا (ٖٖٖآر بی آئی) کے 24 ویں گورنر مقرر کئے گئے ہیں۔

    اقتصادی سیکٹر میں مختلف قومی اور بین الاقوامی اداروں میں اپنی صلاحیتوں کا لوہا منوا چکے ڈاکٹر اُرجت پٹیل ریزرو بینک آف انڈیا (ٖٖٖآر بی آئی) کے 24 ویں گورنر مقرر کئے گئے ہیں۔

    اقتصادی سیکٹر میں مختلف قومی اور بین الاقوامی اداروں میں اپنی صلاحیتوں کا لوہا منوا چکے ڈاکٹر اُرجت پٹیل ریزرو بینک آف انڈیا (ٖٖٖآر بی آئی) کے 24 ویں گورنر مقرر کئے گئے ہیں۔

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:
      نئی دہلی :  اقتصادی سیکٹر میں مختلف قومی اور بین الاقوامی اداروں میں اپنی صلاحیتوں کا لوہا منوا چکے ڈاکٹر اُرجت پٹیل ریزرو بینک آف انڈیا (ٖٖٖآر بی آئی) کے 24 ویں گورنر مقرر کئے گئے ہیں۔  اس عہدے پر تقرری سے قبل انہوں نے 11 جنوری 2013 کو آر بی آئی کے ڈپٹی گورنر کا عہدہ سنبھالا تھا۔ اس عہدے پر ان کی تقرری تین سال کے لئے کی گئی۔اس سے قبل وہ عالمی سطح پر مشورہ سروس دینے والی کمپنی بوسٹن کنسلٹنگ گروپ کے مشیر (توانائی اور انفراسٹرکچر) تھے۔فی الحال وہ ریزرو بینک آف انڈیا کے ڈپٹی گورنر کے ساتھ ہی مانیٹری پالیسی کے انچارج بھی ہیں۔جنوری 2016 میں ڈپٹی گورنر کے عہدے پر دوبارہ ان کی تقرری کی گئی تھی۔
      سال 1986 میں آکسفورڈ یونیورسٹی سے ایم فل اور 1990 میں ییل یونیورسٹی سے معاشیات کے موضوع میں پی ایچ ڈی کی ڈگری حاصل کرنے والے مسٹر پٹیل کی پیدائش 28 اکتوبر 1963 کو ہوئی۔ وہ 2009 سے بروكنگس انسٹی ٹیوٹ کے بیرون ملک مقیم سینئر فیلو ہیں۔
      ڈاکٹر پٹیل سال 95۔1990 کے دوران بین الاقوامی مالیاتی فنڈ (آئی ایم ایف) میں ملازم رہے اور انہوں نے امریکہ، ہندستان، بہاماس اور میانمار ڈیسک پر کام کیا۔سال 97۔1996 میں آئی ایم ایف سے ڈیپوٹیشن پر ریزرو بینک آئے مسٹر پٹیل نے قرض بازار کی ترقی، بینکاری کے شعبے میں بہتری، پنشن فنڈ میں بہتری، حقیقی شرح مبادلہ اور غیر ملکی کرنسی مارکیٹ میں بہتری کے میدان میں اہم کردار ادا کیا ہے۔
      وہ پیٹروکیمیکل سمیت مختلف سیکٹروں میں کاروبار کرنے والی بڑی کمپنی ریلائنس انڈسٹریز کے صدر (کاروبار کی ترقی)، آئی ڈی ایف سی کے ایگزیکٹو ڈائریکٹر اور مینجمنٹ کمیٹی کے رکن (سال 2006۔1997)، ہندستانی حکومت کی مربوط توانائی پالیسی کمیٹی کے رکن (06۔2004) اور گجرات اسٹیٹ پیٹرولیم کارپوریشن لمیٹڈ بورڈ کے رکن بھی رہ چکے ہیں۔
      مسٹر پٹیل سال 2000 اور 2004 کے دوران وزارت خزانہ کے براہ راست ٹیکس میں ٹاسک فورس، ہندستانی مقابلہ جاتی کمیشن کی پروجیکٹ تحقیق اور مارکیٹ مطالعے کی مشاورتی کمیٹی، انفراسٹرکچر پر وزیر اعظم کے ٹاسک فورس کے سکریٹریٹ، مواصلاتی تکنالوجی کے وزراء کے گروپ، سول ایوی ایشن میں بہتری کے لئے بنی کمیٹی، ریاستی بجلی بورڈ پر بجلی وزراء کے ماہر گروپ کے ساتھ ہی سول اور دفاعی خدمات کی پنشن کے نظام کا جائزہ لینے کے لئے قائم اعلی سطحی ماہر گروپ میں بھی کام کرچکے ہیں۔
      First published: