ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

پالگھر ہجومی تشدد پر اکھل بھارتیہ اکھاڑا پریشد کا بڑا بیان ، کہا : مہاراشٹر حکومت کی جانچ پر بھروسہ نہیں

پالگھر ہجومی تشدد معاملہ کی جانچ مہاراشٹر حکومت کی طرف سے کرائی جا رہی ہے ۔ لیکن ریاستی حکومت کی طرف سے کی جانے والی جانچ پر اکھاڑا پریشد نے اپنے عدم اطمینان اظہار کیا ہے ۔

  • Share this:
پالگھر ہجومی تشدد پر اکھل بھارتیہ اکھاڑا پریشد کا بڑا بیان ، کہا : مہاراشٹر حکومت کی جانچ پر بھروسہ نہیں
پالگھر ہجومی تشدد پر اکھل بھارتیہ اکھاڑا پریشد کا بڑا بیان ، کہا : مہاراشٹر حکومت کی جانچ پر بھروسہ نہیں

الہ آباد : مہاراشٹر کے پالگھر میں دو سادھوؤں کی ماب لنچنگ معاملے کو اکھل بھارتیہ اکھاڑا پریشد نے  ملک گیر پیمانے پر اٹھانے کا فیصلہ کیا ہے ۔ اکھل بھارتیہ اکھاڑا پریشد نے کہا ہے کہ پالگھر معاملہ کو لے کر تین مئی کے بعد تمام اکھاڑوں کا اجلاس  بلایا جائے گا ۔ اکھاڑا پریشد نے یہ بھی کہا کہ اس معاملہ میں مہاراشٹر حکومت کی طرف سے کرائی جا رہی جانچ پر سادھو سنتوں کو قطعی بھروسہ نہیں ہے ۔ گذشتہ دنوں مہاراشٹر کے پالگھر میں جونا اکھاڑے سے وابستہ دو سادھوؤں کو ان کے ڈرائیور سمیت تشدد پر آمادہ ایک ہجوم نے قتل کر دیا تھا ۔


قتل معاملہ کی جانچ مہاراشٹر حکومت کی طرف سے کرائی جا رہی ہے ۔ لیکن ریاستی حکومت کی طرف سے کی جانے والی جانچ پر اکھاڑا پریشد نے  اپنے عدم اطمینان اظہار کیا ہے ۔ الہ آباد میں اکھاڑا پریشد کے صدر مہنت نریندر گری نے نیوز ۱۸ سے بات کرتے ہوئے کہا کہ مہاراشٹر حکومت اس پورے معاملہ پر لیپا پوتی کرنے کی کوشش کررہی ہے ۔ مہنت نریندر گری نے کہا کہ مہاراشٹر حکومت اس معاملہ کی جانچ سی آئی ڈی سے کرا رہی ہے ، جوریاستی حکومت کی نگرا نی میں ہی کا م کرتی ۔ ایسے میں اکھاڑا پریشد کے سادھو سنت اس جانچ سے مطمئن نہیں ہیں ۔


اکھاڑا پریشد نے مطالبہ کیا ہے کہ پالگھر ماب لنچنگ کی جانچ  سی بی آئی سے کرائی جائے ۔ کھاڑا پریشد نے اس پورے معاملہ میں پولیس کے کر دار پر بھی سنگین سوالات اٹھائے ہیں ۔ مہنت نریندر گری کا کہنا ہے کہ پولیس کی موجودگی میں تین افراد کو پیٹ پیٹ کر قتل دینا ایک سنگین جرم ہے جس کو اکھاڑا پریشد قطعی برداشت نہیں کرے گا ۔ مہنت نریندر گری کا کہنا تھا کہ لاک ڈاؤن ختم ہوتے ہی اکھاڑا پریشد اس معاملہ میں تمام سادھو سنتوں کا اجلاس طلب کرکے آئندہ کا لائحہ عمل طے کرے گا ۔ ان کا کہنا تھا کہ سادھوؤں کے قتل کے خلاف ملک گیر پیمانے پر بڑی تحریک چلائی جائے گی ۔


واضح رہے کہ اکھل  بھارتیہ اکھاڑا پریشد میں گیارہ اکھاڑے شامل ہیں ، جس میں جونا اکھاڑا سادھو سنتوں کا سب سے بڑا اکھاڑا سمجھا جاتا ہے ۔ خود اکھاڑا پریشد کے صدر مہنت نریندر گری کا تعلق بھی جونا اکھاڑے سے ہے ۔ پالگھر میں ہجومی تشدد کا شکار ہونے والے سادھو مہنت کلپ ورکش گری (۷۰) مہنت سشیل گری (۳۵) اور ان کے ڈرائیور نیلیش تیگڑے (۳۰)  ممبئی سے گجرات کی طرف کار سے جا رہے تھے ۔ اسی دوران پالگھرعلاقہ میں ایک بڑے ہجوم نے ان تینوں افراد کو پیٹ پیٹ کر مار ڈالا تھا ۔
First published: Apr 23, 2020 06:29 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading