உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    اترپردیش : مہنگائی کی مار سے بدحال بنکر کا کپڑا کاروبار ، پاورلوم صنعت بربادی کی کگار پر

    اترپردیش : مہنگائی کی مار سے بدحال بنکر کا کپڑا کاروبار ، پاورلوم صنعت بربادی کی کگار پر

    اترپردیش : مہنگائی کی مار سے بدحال بنکر کا کپڑا کاروبار ، پاورلوم صنعت بربادی کی کگار پر

    نوٹ بندی اور جی ایس ٹی کی مار سے بدحال میرٹھ کا بنکر طبقہ کورونا وبا کے قہر میں لاک ڈاون کے بعد کاروبار کی بربادی سے کچھ اُبھرنے کی کوشش کر ہی رہا تھا کہ پاور لوم صنعت پر مہنگائی کی مار پڑ گئی ہے۔

    • Share this:
    میرٹھ : نوٹ بندی اور جی ایس ٹی کی مار سے بدحال میرٹھ کا بنکر طبقہ کورونا وبا کے قہر میں لاک ڈاون کے بعد کاروبار کی بربادی سے کچھ اُبھرنے کی کوشش کر ہی رہا تھا کہ پاور لوم صنعت پر مہنگائی کی مار پڑ گئی ہے۔ پیٹرول اور ڈیزل کے ساتھ دھاگے پر بڑھی قیمتوں کی دوہری مار نے پاور لوم صنعت کو بربادی کی کگار پر پہنچا دیا ہے ۔

    مغربی یو پی اور این سی آر میں میرٹھ کپڑا کاروبار کا سب سے بڑا مرکز رہا ہے ۔  ضلع میں تقریباً 70 ہزار پاورلوم پر گھریلو استعمال اور ایکسپورٹ کوالیٹی کا کپڑا تیار کیا جاتا ہے ، جس سے نہ صرف اس شہر کے ہزاروں بنکر خاندان بلکہ مشین پر کام کرنے والے ہزاروں کاریگروں کو بھی روزگار حاصل ہوتا ہے ، لیکن مہنگائی کی مار نے اب میرٹھ کی اس کپڑا صنعت کی بھی کمر توڑ دی ہے ۔ بجلی کے فلیٹ ریٹ ختم ہونے سے بجلی کا اضافی بوجھ برداشت کر رہے بنکر اب پیٹرول اور ڈیزل اور دھاگے کی مہنگائی سے پریشان ہیں ۔

    مہنگائی کے اضافی بوجھ کا اثر محض پاورلوم مالکان پر ہی نہیں پڑا ہے ، بلکہ پاور لوم میں کام کرنے والے ہزاروں غریب کاریگر بھی بڑی تعداد میں پاور لوم بند ہونے یا کام کم ہو جانے سے بری طرح متاثر ہوئے ہیں ، وہیں بنکر ایسوسی ایشن کے ذمہ داران کا کہنا ہے کہ میرٹھ کے بنکروں کے ساتھ پہلے ہی سوتیلا برتاو ہوتا رہا ہے ، ایسے میں مہنگائی کا یہی عالم رہا تو میرٹھ کی صنعت کو برباد ہونے سے بچایا نہیں جا سکے گا ۔

    اسپورٹس سامان اور قینچی کے علاوہ میرٹھ کی ایک پہچان یہاں کی کپڑا صنعت سے بھی رہی ہے ، لیکن آج کے حالات میں اس صنعت سے وابستہ بنکر اس کی پہچان کو قائم رکھنے کے لیے وجود برقرار رکھنے کی جدوجہد کر رہے ہیں ۔
    Published by:Imtiyaz Saqibe
    First published: