ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

اناو آبروریزی کیس : ملزم بی جے پی ممبر اسمبلی کلدیپ سنگھ سینگرکو سی بی آئی نے کیا گرفتار

الہ آباد ہائی کورٹ کے سخت موقف کو دیکھتے ہوئے اناؤکے سرخیوں میں رہنے والے اجتماعی عصمت دری معاملہ کے ملزم بھارتیہ جنتاپارٹی (بی جے پی )رکن اسمبلی کلدیپ سنگھ سینگر کو سی بی آئی نے گرفتارکرلیا۔

  • Share this:
اناو آبروریزی کیس : ملزم بی جے پی ممبر اسمبلی کلدیپ سنگھ سینگرکو سی بی آئی نے کیا گرفتار
کلدیپ سنگھ سینگر۔ فائل فوٹو

لکھنؤ: الہ آباد ہائی کورٹ کے سخت موقف کو دیکھتے ہوئے اناؤکے سرخیوں میں رہنے والے اجتماعی عصمت دری معاملہ کے ملزم بھارتیہ جنتاپارٹی (بی جے پی )رکن اسمبلی کلدیپ سنگھ سینگر کو سی بی آئی نے گرفتارکرلیا۔ سی بی آئی نے سینگر کو علی الصبح پانچ بجے لکھنؤ میں انکے گھر سے حراست میں لیاتھا۔سی بی آئی ان سے مسلسل پوچھ گچھ کررہی تھی۔عدالت نے سخت موقف اختیارکرتے ہوئے سی بی آئی سے کہاتھا کہ حراست نہیں ملزم رکن اسمبلی کو گرفتارکرو۔

قابل ذکر ہے کہ جمعہ کی صبح سویرے چار بجے سی بی آئی کی ٹیم نے ملزم ممبر اسمبلی کو اپنی حراست میں لیا تھا ۔ اس کے بعد سے ہی سی بی آئی کی ٹیم مسلسل بی جے پی ممبر اسمبلی سے کئی امور پر پوچھ گچھ کررہی تھی۔ اس درمیان سی بی آئی کی ٹیم اناو بھی پہنچی ۔ وہاں متاثرہ اور اس کے اہل خانہ سے پوچھ گچھ کی گئی ۔ اس کے بعد ماکھی تھانہ کے چھ پولیس اہلکاروں کو بھی حراست میں لے لیا ،جنہیں لے کر سی بی آئی کی ٹیم لکھنو آرہی ہے۔ اس کے علاوہ پولیس نے ایس پی ، پوسٹ مارٹم رپورٹ کرنے والے ڈاکٹر ، علاج کرنے والے ڈاکٹروں سے بھی پوچھ گچھ کی ہے۔

اس سے پہلے ہائی کورٹ نے بھی معاملہ میں داخل ایک عرضی پر فیصلہ دیتے ہوئے ریاستی حکومت کے وکیل راگھویندر سنگھ سے گرفتاری نہ ہونے پر اعتراض کیا تھا ۔ ہائی کورٹ نے کہا کہ حراست نہیں ، سی بی آئی ملزم ممبر اسمبلی کی فوری گرفتاری کرے۔

First published: Apr 13, 2018 11:06 PM IST