ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

گیان واپی مسجد کی ASI جانچ کے حکم کو الہ آباد ہائی کورٹ میں چیلنچ، روک لگانے کا مطالبہ

کاشی وشو ناتھ مندر اور گیان واپی مسجد معاملے میں وارانسی کی فاسٹ ٹریک کورٹ کے ذریعے ایس ایس آئی جانچ کے حکم کو انجمن انتظامیہ کمیٹی نے الہ آباد ہائی کورٹ میں چیلنج دیا ہے۔

  • Share this:
گیان واپی مسجد کی ASI جانچ کے حکم کو الہ آباد ہائی کورٹ میں چیلنچ، روک لگانے کا مطالبہ
کاشی وشو ناتھ مندر اور گیان واپی مسجد معاملے میں وارانسی کی فاسٹ ٹریک کورٹ کے ذریعے ایس ایس آئی جانچ کے حکم کو انجمن انتظامیہ کمیٹی نے الہ آباد ہائی کورٹ میں چیلنج دیا ہے۔

کاشی وشو ناتھ مندر اور گیان واپی مسجد معاملے میں وارانسی کی فاسٹ ٹریک کورٹ کے ذریعے ایس ایس آئی جانچ کے حکم کو انجمن انتظامیہ کمیٹی نے الہ آباد ہائی کورٹ میں چیلنج دیا ہے۔ انجمن انتظامیہ کمیٹی نے وارانسی کورٹ کے آٹھ اپریل کے مسجد احاطے کی اے اسی آئی جانچ کے حکم پر روک لگائے جانے کا مطالبہ کیا ہے۔ عرضی میں کہا گیا کہ معاملے پر الی آباد ہائی کورٹ نے پہلے فیصلہ ریزرو کیا ہوا ہے۔ ایسے میں ہائی کورٹ کا فیصلہ آنے تک ایے ایس آئی کو جانچ کا حکم دینا غلط ہے۔


عرضی میں کہا گیا ہے کہ عرضی پر جلد سے جلد سماعت پر وارانسی عدالت کے حکم پر روک لگائی جائے۔ ساتھی ہی عرضی میں کہا گیا ہے کہ وارانسی کورٹ نے پوجا کے مقامات (خصوصی دفعات) ایکٹ 1991 کے آرڈر کو نظرانداز کیا ہے۔


وارانسی عدالت نے دئے ہیں یہ حکم

دراصل ،وارانسی کی فاسٹ ٹریک عدالت نے اے ایس آئی ASI کو کاشی وشوناتھ مندر اور گیان واپی مسجد کیس کی توارانسی کی فاسٹ ٹریک کورٹ نے اے ایس آئی ASI جانچ کا حکم دیا ہے۔ عدالت نے پانچ رکنی کمیٹی کو حکم دیا ہے کہ وہ مسجد احاطے کی آثار قدیمہ کی تحقیقات کرے۔

مندر فریق کا یہ ہے مطالبہ۔۔
دراصل اس معاملے میں مندر فریق کا کہنا ہے کہ 1664 میں مغل حکومت اورنگزیب نے مندر کو تباہ کیا تھا۔ مندر کو تباہ کرنے کے بعد اس کے باقیات پر ہی مسجد کی تعمیر کی گئی ہے۔ حقیقت جاننے کے لئے ہی عدالت میں پورے احاطے کا سروے کرائے جانے کا مطالبہ کیا گیا ہے۔

مسجد فریق کی ہی ہے دلیل۔۔
ادھر مسجد فریق کے مطابق 1991 کے پوجا مقام قانون کی یہ کھلے طور پر خلاف ورزی ہے۔ 1991 میں بنے پوجا کے مقام قانون کے مطابق 15 اگست 1947 سے پہلے وجود میں آئے کسی بھی مذہبی جگہ کو دوسرے مذہبی مقام میں نہیں تبدیل کیا جاسکتا۔ معاملے میں کورٹ سے جلد سے جلد سماعت کرکے وارانسی کورٹ کے حکم پر روک لگنے کا مطالبہ کیا ہے۔ الہ آباد ہائی کورٹ نے اسی معاملے پر15 مارچ کو سماعت کرتے ہوئے فیصلہ محفوظ کیا ہے۔
Published by: Sana Naeem
First published: Apr 13, 2021 10:33 PM IST