உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ورون گاندھی کا وزیر اعظم سے مطالبہ- ایم ایس پی پر بنے قانون، ’شہید‘ کسانوں کو ملے ایک کروڑ کا معاوضہ

    ورون گاندھی کا وزیر اعظم سے مطالبہ- ایم ایس پی پر بنے قانون، ’شہید‘ کسانوں کو ملے ایک کروڑ کا معاوضہ

    ورون گاندھی کا وزیر اعظم سے مطالبہ- ایم ایس پی پر بنے قانون، ’شہید‘ کسانوں کو ملے ایک کروڑ کا معاوضہ

    Varun Gandhi writes to PM Modi: بی جے پی رکن پارلیمنٹ ورون گاندھی نے خط میں لکھا کہ اس آندولن کے دوران 700 سے زیادہ کسان ’شہید‘ ہوگئے ہیں اور یہ فیصلہ پہلے ہی لے لیا جانا چاہئے تھا۔ انہوں نے لکھا ‘میری آپ سے گزارش ہے کہ آندولن کے دوران شہید ہونے والے ہمارے کسان بھائی بہنوں کے اہل خانہ کے تئین ہمدردی ظاہر کرنے کے دوران، ہر ایک کے لئے ایک کروڑ کے معاوضے کا اعلان کیا جائے‘۔

    • Share this:
      نئی دہلی: بی جے پی (BJP) کے رکن پارلیمنٹ ورون گاندھی نے کسانوں سے جڑے ایم ایس پی (MSP) کے موضوعات پر وزیر اعظم نریندر مودی (PM Narendra Modi) کو خط لکھا ہے۔ انہوں نے وزیر اعظم مودی سے کم از کم قیت (MSP) پر قانون بنانے کا مطالبہ کیا ہے۔ ساتھ ہی انہوں نے حکومت سے آندولن کے دوران جان گنوانے والے کسانوں کے لئے ایک ایک کروڑ روپئے کے معاوضے کا اعلان کرنے کی اپیل کی ہے۔ جمعہ کو مرکزی حکومت نے تین زرعی قوانین (Three Farm Laws) کو واپس لینے کا اعلان کر دیا ہے۔ حکومت کا کہنا ہے کہ آئندہ پارلیمانی سیشن میں قانون واپسی کا عمل مکمل کرلیا جائے گا۔ کسانوں کے علاوہ کئی لیڈر بھی حکومت سے ایم ایس پی پر قانون کا مطالبہ کرچکے ہیں۔

      ورون گاندھی نے ہفتہ کو خط کے ذریعہ زرعی قوانین واپس لینے پر وزیر اعظم مودی کا شکریہ ادا کیا ہے۔ ساتھ ہی انہوں نے حکومت سے کم ازکم امدادی قیمت پر قانون بنانے کی بات کہی ہے۔ انہوں نے لکھا، ’تینوں زرعی قوانین منسوخ کرنے کے اعلان کے لئے میں آپ کے بڑے دل کا شکریہ ادا کرتا ہوں‘۔ ایم سی پی کو لے کر انہوں نے لکھا کہ اس موضوع کے پورے نہیں ہونے تک تحریک ختم نہیں ہوگی۔ انہوں نے ایم ایس پی پر قانون بنانے کا مطالبہ کیا ہے۔

      ایک کروڑ روپئے کا معاوضہ دیا جائے: ورون گاندھی

      ورون گاندھی نے لکھا کہ اس آندولن کے دوران 700 سے زیادہ کسان ’شہید‘ ہوگئے ہیں اور یہ فیصلہ پہلے ہی لے لیا جانا چاہئے تھا۔ انہوں نے لکھا ‘میری آپ سے گزارش ہے کہ آندولن کے دوران شہید ہونے والے ہمارے کسان بھائی بہنوں کے اہل خانہ کے تئین ہمدردی ظاہر کرنے کے دوران، ہر ایک کے لئے ایک کروڑ کے معاوضے کا اعلان کیا جائے‘۔ ساتھ ہی انہوں نے کسانوں کے خلاف درج ’جھوٹی‘ ایف آئی آر بھی خارج کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔

      یہ بھی پڑھیں۔

      Lakhimpur Case: پرینکا گاندھی نے کہا- وزیر داخلہ کے اسٹیج شیئر نہ کریں، انہیں برخاست کریں وزیر اعظم مودی


      ورون گاندھی نے کیا لکھیم پور کھیری معاملے کا ذکر

      بی جے پی رکن پارلیمنٹ نے وزیر اعظم مودی کو لکھے خط میں لکھیم پوری کھیری معاملے میں ملزم آشیش مشرا کے والد اور مرکزی وزیر مملکت اجے مشرا کے بیٹے کے خلاف سخت کارروائی کا مطالبہ کیا ہے۔ خبریں آئی تھیں کہ اکتوبرم یں لکھیم پور کھیری میں مرکزی وزیر کے بیٹے کی گاڑی نے احتجاج کر رہے کسانوں کو روند دیا تھا، جس کے بعد علاقے میں تشدد بھڑک گئی تھی۔ تشدد میں 8 لوگوں کی موت ہوگئی تھی۔ ان میں چار کسان، ایک صحافی، دو بی جے پی کارکنان اور ایک ڈرائیور کا نام شامل ہے۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: