ہوم » نیوز » No Category

دہلی کے کئی ہوٹلوں میں فروخت ہورہا ہے گائے کا گوشت ، وی ایچ پی نے نجیب جنگ کو لکھا خط

نئی دہلی: وشو ہندو پریشد نے پابندی کے باوجود دہلی کے کئی ہوٹلوں میں گائے کا گوشت پیش کئے جانے کی شکایت کرتے ہوئے اسے روکنے کے لئے لیفٹیننٹ گورنر نجیب جنگ کو خط لکھا ہے۔

  • UNI
  • Last Updated: Nov 03, 2015 06:10 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
دہلی کے کئی ہوٹلوں میں فروخت ہورہا ہے گائے کا گوشت ، وی ایچ پی نے نجیب جنگ کو لکھا خط
نئی دہلی: وشو ہندو پریشد نے پابندی کے باوجود دہلی کے کئی ہوٹلوں میں گائے کا گوشت پیش کئے جانے کی شکایت کرتے ہوئے اسے روکنے کے لئے لیفٹیننٹ گورنر نجیب جنگ کو خط لکھا ہے۔

نئی دہلی: وشو ہندو پریشد نے پابندی کے باوجود دہلی کے کئی ہوٹلوں میں گائے کا گوشت پیش کئے جانے کی شکایت کرتے ہوئے اسے روکنے کے لئے لیفٹیننٹ گورنر نجیب جنگ کو خط لکھا ہے۔


وی ایچ پی کی دہلی اکائی کے سیکریٹری رام پال سنگھ یادو کی جانب سے لیفٹننٹ گورنر کے بھیجے گئے اس خط کی نقل یہاں میڈیا کے لئے جاری کرتے ہوئے وی ایچ پی ترجمان ونود بنسل نے کہا کہ کیرل بھون کے واقعہ کے بعد سے دہلی کے کئی ہوٹلوں میں گائے کا گوشت پیش کئے جانے کی خبریں لگاتار آرہی ہیں۔ کیرل بھون کے واقعہ پر جس طرح کا ردعمل سامنے آیا ہے وہ ملک کے قانون اور ضابطوں کی صریح خلاف ورزی تو ہے ہی ساتھ ہی ہندوؤں کے جذبات کو ٹھیس پہنچانے کی کارروائی بھی ہے۔ ایسے میں سرکار کو اس کا نوٹس لیتے ہوئے فوری قدم اٹھانے چاہئیں۔


مسٹر بنسل نے دہلی میں زرعی شعبہ میں استعمال میں لائے جانے والے مویشیوں کے تحفظ کے لئے بنائے گئے قانون 1994 کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ اس کے تحت دہلی میں گؤکشی ،گائے کے گوشت کی خریدوفروخت، برآمد،ذخیرہ اور استعمال پر پوری طرح سے پابندی ہے۔لیکن اس کے باوجود شہر کے کئی ہوٹلوں میں اب بھی کھلے عام بیچا جارہا ہے جس سے اس قانون کے نفاذ کے ذمہ داروں پر سوال اٹھانا لازمی ہے۔


وی ایچ پی کا کہنا ہے کسی بھی لغت میں بیف کا مطلب بھینس کا گوشت نہیں لکھا ہوا ہے۔ یہ لوگوں کو دھوکہ دینے کی دانستہ شرارت ہے تاکہ اس کی آڑ میں گائے کا گوشت فروخت کیا جاسکے۔


وی ایچ پی نے لفٹیننٹ گورنر کو لکھے خط میں صاف کہا ہے کہ وہ گائے کے گوشت کی فروخت پر مکمل پابندی لگانے کے لئے لازمی اور سخت ہدایات جاری کرے تاکہ ملک کے قانون اور ضابطوں پر عمل ہونے کے ساتھ ہی ہندوؤں کے جذبات کو ٹھیس پہنچانے والی کارروائی پر پابندی لگ سکے۔


خط کی نقل مرکزی وزارت داخلہ، پولیس کمشنر ، دہلی نگر نگم کے کمشنر اور مئر نیز دہلی ہوٹل اور ریسٹوران یونین کو بھی بھیجی گئی ہے ۔ وی ایچ پی نے چیلنج کرتے ہوئے کہا کہ اگر گائے کے گوشت کی بکری پر فورٍاً پابندی نہ لگائی گئی تو وہ اس کے خلاف تحریک شروع کرے گی۔

First published: Nov 03, 2015 06:10 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading