پلوامہ میں تیسرے دن بھی معمولات زندگی مفلوج ، میر واعظ مولوی عمر فاروق نظربند

حریت کانفرنس کے اعتدال پسند گروپ کے چیرمین میر واعظ مولوی عمر فاروق کو ضلع پلوامہ کے کاکہ پورہ جانے سے روکنے کیلئے نظربند کردیا گیا ہے

Aug 09, 2015 02:10 PM IST | Updated on: Aug 09, 2015 02:10 PM IST
پلوامہ میں  تیسرے دن بھی معمولات زندگی مفلوج ، میر واعظ مولوی عمر فاروق نظربند

سری نگر :  حریت کانفرنس کے اعتدال پسند گروپ کے چیرمین میر واعظ مولوی عمر فاروق کو ضلع پلوامہ کے کاکہ پورہ جانے سے روکنے کیلئے نظربند کردیا گیا ہے۔ کاکہ پورہ میں 6 اگست کوجنگجوؤں اور فوج کے مابین جھڑپ میں لشکرطیبہ سے وابستہ ایک مقامی جنگجو مارا گیا تھا۔جنگجو کی ہلاکت کے بعد ضلع پلوامہ میں زبردست تشدد بھڑک اٹھا تھا جہاں آج مسلسل تیسرے دن بھی معمولات زندگی مفلوج رہے۔ حریت کانفرنس ترجمان ایڈوکیٹ شاہد الاسلام نے بتایا کہ سیکورٹی فورسز اور ریاستی پولیس اہلکاروں کی ایک بڑی تعداد آج صبح میرواعظ کی نگین رہائش گاہ کے باہر تعینات کردی گئی۔

بعد ازاں میرواعظ کو مطلع کیا گیا کہ انہیں نظربند کردیا گیا ہے اور وہ اگلے احکامات تک اپنی رہائش گاہ سے باہر نہیں نکل سکتے ہیں۔ ایڈوکیٹ اسلام نے بتایا کہ میرواعظ کو پروگرام کے مطابق کاکہ پورہ پلوامہ جانا تھا جہاں سیکورٹی فورسز کی فائرنگ سے کئی نوجوان زخمی ہوگئے ہیں۔دریں اثنا حریت کانفرنس کے سخت گیر دھڑے کے چیرمین سید علی گیلانی اور ڈیموکریٹک فریڈم پارٹی کے سربراہ شبیر احمد شاہ بدستور اپنی رہائش گاہوں پر نظربند ہیں۔

دریں اثنا  جنوبی کشمیر کے ضلع پلوامہ میں اتوار کو تیسرے دن بھی معمولات زندگی مفلوج رہے جہاں لشکر طیبہ کے کمانڈر کی ہلاکت کے بعد تشدد بھڑک اٹھا تھا۔قابل ذکر ہے کہ ضلع پلوامہ کے کاکہ پورہ میں 6 اگست کوجنگجوؤں اور فوج کے مابین جھڑپ میں لشکرطیبہ سے وابستہ ایک مقامی جنگجو کو مارا گیا۔

سرکاری ذرائع نے بتایا کہ ضلع کے کسی بھی علاقے میں پابندیاں نہیں ہیں لیکن کاکہ پورہ اور دیگر کچھ علاقوں کے لوگوں نے الزام لگایا کہ انہیں اپنے گھروں سے باہر نکلنے کی اجازت نہیں دی گئی۔ اگرچہ کسی بھی علیحدگی پسند جماعت نے ہڑتال کی کال نہیں دی ہے لیکن باوجود اس کے قصبہ پلوامہ اور ضلع کے دیگر علاقوں میں آج مسلسل تیسرے دن بھی دکانیں اور تجارتی مراکز بند رہے جبکہ ٹرانسپورٹ سڑکوں سے غائب رہا۔مزید احتجاجی مظاہروں کو روکنے اور امن وامان کو بنائے رکھنے کیلئے ضلع کے حساس علاقوں میں سیکورٹی فورسز کی اضافی نفری تعینات کردی گئی ہے۔

Loading...

Loading...