پٹاخے چھوڑنے پر مکمل پابندی عائد کرنے سے سپریم کورٹ کا انکار

نئی دہلی: سپریم کورٹ نے تہواروں کے موقع پر پٹاخے چھوڑنے پر مکمل پابندی عائد کرنے سے آج انکار کردیا ۔

Oct 28, 2015 06:28 PM IST | Updated on: Oct 28, 2015 06:28 PM IST
پٹاخے چھوڑنے پر مکمل پابندی عائد کرنے سے سپریم کورٹ کا انکار

نئی دہلی: سپریم کورٹ نے تہواروں کے موقع پر پٹاخے چھوڑنے پر مکمل پابندی عائد کرنے سے آج انکار کردیا ۔

چیف جسٹس ایچ ایل دتو اور جسٹس ارون کمار مشرا کی بنچ نے متعلقہ فریقین کے دلائل سننے کے بعد چھ ماہ سے چودہ ماہ کے تین بچوں کی طرف سے دائر کردہ اس درخواست کو مسترد کردیا جس میں پٹاخے چھوڑنے پر مکمل پابندی عائد کرنے کی درخواست کی گئی تھی۔ حالانکہ عدالت نے مرکزی حکومت کو ہدایت دی کہ وہ پٹاخوں کی آلودگی سے صحت پر پڑنے والے منفی اثرات کے سلسلے میں بیداری پیدا کرنے کے لئے اشتہارات جاری کریں۔

عرضی گذاروں ارجن گوپال، ارو بھنڈاری اور جویا راو بھسین نے دشہرے اور دیوالی جیسے تہواروں پر پٹاخے چھوڑنے پر مکمل پابندی عائد کرنے کی عدالت سے درخواست کی تھی۔

جسٹس دتو نے کہا کہ عدالت عظمی نے پٹاخے چھوڑنے کے سلسلے میں 2005میں ہی گائیڈ لائنس جار ی کئے تھے۔ عدالت نے اس وقت بھی حکم دیا تھا کہ دس بجے رات کے بعد پٹاخے چھوڑنے کی اجازت نہیں ہوگی۔

Loading...

عرضی گذاروں کی طرف سے معاملے کی پیروی کررہے سینئر وکیل ابھیشیک منو سنگھوی نے عدالت سے دیوالی کے موقع پر صرف دو گھنٹے ہی پٹاخے چھوڑنے کی اجازت دینے کی درخواست کی تھی لیکن اس نے اس سلسلے میں فی الحال کوئی نئی ہدایت جاری کرنے سے یہ کہتے ہوئے انکارکردیا کہ تمام متعلقہ فریقین کے دلائل سنے بغیر وہ ایسا نہیں کرسکتا۔

حالانکہ عدالت نے پٹاخوں کے منفی اثرات کے بارے میں بڑے پیمانے پربیدار ی پیدا کرنے کے سلسلے میں 16 اکتوبر کے حکم پر عمل نہیں کرنے کے لئے مرکزی حکومت کے خلاف ناراضگی کا بھی اظہار کیا ۔ عدالت نے حکومت کی طرف سے پیش ہونے والے سالسٹر جنرل رنجیت کمار کو ہدایت دی کہ وہ مرکزی حکومت کو 31 اکتوبر سے 12نومبر تک مستقل طور پر پٹاخوں کے منفی اثرات کے سلسلے میں اشتہارات شائع اور نشر کرنے کی اطلاع دیں۔

خیال رہے کہ مرکزی حکومت نے کل عدالت سے کہا تھا کہ وہ دیوالی جیسے تہوار پر پٹاخے چھوڑنے پر مکمل پابندی عائد کرنے کے حق میں نہیں ہے ۔ حکومت کا کہنا تھا کہ خود عدالت عظمی نے اپنے پرانے حکم میں صبح چھ بجے سے رات دس بجے تک پٹاخے چھوڑنے کی اجازت دے رکھی ہے۔

Loading...