چار پولیس اہلکاروں نے نوجوان کو بے رحمی سے پیٹا، ہوئے لائن حاضر

کانپور۔ اترپردیش پولیس کسی ملزم کے ساتھ کتنی بے رحمی سے پیش آتی ہے، اس کی مثال فرخ آباد کے تھانے میں دیکھنے کو ملی۔

Aug 01, 2015 11:37 AM IST | Updated on: Aug 01, 2015 11:42 AM IST
چار پولیس اہلکاروں نے نوجوان کو بے رحمی سے پیٹا، ہوئے لائن حاضر

کانپور۔ اترپردیش پولیس کسی ملزم کے ساتھ کتنی بے رحمی سے پیش آتی ہے، اس کی مثال فرخ آباد کے تھانے میں دیکھنے کو ملی۔

فرخ آباد ضلع میں پولیس اہلکاروں نے ایک نابالغ لڑکے کو بیلٹ سے بری طرح مارا پیٹا۔ اس واقعہ کا ویڈیو سامنے آنے کے بعد پولیس سپرنٹنڈنٹ نے چار پولیس اہلکاروں کو لائن حاضر کر دیا۔ پولیس نے جمعرات کی شام تین نوجوانوں کو چوری کی سازش رچنے کے الزام میں پکڑا تھا اور ان کے قبضے سے 315 بور طمنچے، دو کارتوس اور چابی کے گچھے برآمد کئے تھے۔

Loading...

الزام ہے کہ جب ان نوجوانوں کا چالان کیا جا رہا تھا، اس وقت سپاہی سبودھ یادو اور دیپک نے نابالغ سرویش کو بیلٹ سے جم کر پیٹا۔ داروغہ رام سنیہی اور میراپور کے ایس او بھی وہاں پر کھڑے تھے، لیکن انہوں نے اس معاملے میں کچھ بھی نہیں کیا۔

اب پولیس سپرنٹنڈنٹ دنیش کمار نے بتایا کہ میراپور کے سالیگرام ورما اور داروغہ رام سنیہی کے ساتھ سپاہی سبودھ اور دیپک کو لائن حاضر کردیا گیا ہے اور کہا کہ اس معاملے کی آگے کی جانچ جاری ہے۔

جمعہ کی شام کو پولیس اہلکاروں نے ایک ملزم کو سیمنٹ کے کھمبے کے سہارے کھڑا کر دوسری طرف سے اس کے ہاتھ پکڑ لئے ۔ اس کے بعد باری باری داروغہ اور سپاہی نے ملزم کو بیلٹ سے جم کر پیٹا۔ ملزم نوجوان چلاتا رہا اور جتنی زور سے وہ چلا رہا تھا وہاں موجود سپاہی اور داروغہ مسکرا رہے تھے۔ پولیس کی یہ کرتوت کیمرے میں قید ہو گئی۔

Loading...